Saturday , November 25 2017
Home / ہندوستان / مسعود اظہر کو دہشت گرد قرار دینے کی راہ میں چین دوبارہ رکاوٹ

مسعود اظہر کو دہشت گرد قرار دینے کی راہ میں چین دوبارہ رکاوٹ

امریکہ کا اقوام متحدہ کو مکتوب ، پاکستانی عدالت نے سعید کی ضمانت پر رہائی کیخلاف درخواست مسترد
نئی دہلی۔ 7 فروری (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان پر دباؤ میں برطانیہ اور فرانس کے ساتھ اضافہ کرتے ہوئے امریکہ نے اقوام متحدہ کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے پٹھان کوٹ حملہ کے کلیدی سازشی جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کو ’’عالمی دہشت گرد‘‘ قرار دینے کا ایک بار پھر مطالبہ کیا جبکہ چین نے اس اقدام کی ایک بار پھر مخالفت کرتے ہوئے اس کوشش کو ملتوی کرادیا۔ حکومت کے سینئر ذرائع کے بموجب امریکہ نے دیگر دو مستقل ارکانِ سلامتی کونسل کی مدد سے اقوام متحدہ پر ایک بار پھر زور دیا کہ پٹھان کوٹ حملہ کے کلیدی سازشی مسعود اظہر کو عالمی دہشت گرد قرار دیا جائے جبکہ چین نے ایک بار پھر اس اقدام کی مخالفت کرتے ہوئے اسے ملتوی کروا دیا۔ لاہور سے موصولہ اطلاع کے بموجب پاکستان کی ایک عدالت نے ایک درخواست مسترد کردی جس میں جماعت الدعوۃ کے سربراہ ممبئی حملے کے کلیدی سازشی حافظ محمد سعید کی ضمانت پر رہائی کو چیلنج کیا گیا تھا۔ لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس ارم سجاد گل نے سینئر قانون داں کی درخواست تیکنیکی بنیادوں پر مسترد کردی۔ قبل ازیں ان کے دلائل کی سماعت کی گئی تھی۔ عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا کہ درخواست گزار نے کوئی ٹھوس وجہ ظاہر نہیں کی ہے کہ حافظ سعید کو ضمانت پر کیوں رہا نہ کیا جائے اور انہیں حراست میں کیوں رکھا جائے۔ عدالت نے کہا کہ سعید نے جاریہ ہفتہ علیحدہ درخواست پیش کرتے ہوئے اپنی حبس بیجا کو چیلنج کیا ہے۔ ان کی درخواست مفاد عامہ سینئر قانون داں سرفراز حسین نے پیش کرتے ہوئے ادعا کیا تھا کہ جماعت الدعوۃ کے سربراہ کو غیرقانونی حراست میں رکھا گیا ہے جبکہ انسداد دہشت گردی قانون ان پر لاگو نہیں ہوتا۔

TOPPOPULARRECENT