Wednesday , December 19 2018

مسلح افواج کو عصری تقاضوں سے آراستہ کرنے پر توجہ

نئی دہلی ۔23اپریل ( سیاست ڈاٹ کام) وزیر دفاع منوہر پاریکر نے آج فوج ‘ فضائیہ اور بحریہ سے کہا کہ وہ مالیتی ضرورتوں کو پورا کریں اور تمام دستیاب وسائل سے استفادہ کریں‘ کیونکہ حکومت مسلح افواج کو عصری تقاضوں سے آراستہ کرنے کے عزم کو پورا کرنا چاہتی ہے ۔ منوہر پاریکر جنہوں نے قبل ازیں تینوں خدمات کے افسران سے کہا تھا کہ وہ اپنے مطالبات

نئی دہلی ۔23اپریل ( سیاست ڈاٹ کام) وزیر دفاع منوہر پاریکر نے آج فوج ‘ فضائیہ اور بحریہ سے کہا کہ وہ مالیتی ضرورتوں کو پورا کریں اور تمام دستیاب وسائل سے استفادہ کریں‘ کیونکہ حکومت مسلح افواج کو عصری تقاضوں سے آراستہ کرنے کے عزم کو پورا کرنا چاہتی ہے ۔ منوہر پاریکر جنہوں نے قبل ازیں تینوں خدمات کے افسران سے کہا تھا کہ وہ اپنے مطالبات میں سے ترجیحات کو پیش کریں اور یہ واضح کردیا کہ مسلح افواج کو عصری تقاضوں کو آراستہ کرنے کیلئے ٹکنالوجی کا استعمال ضروری ہے ۔

ہمارے سپاہیوں ‘ ملاحوں اور فضائی جنگجوؤں میں اخلاقی حوصلہ بڑھانے اور انہیں ترغیب دینے کیلئے ضروری ہے کہ تمام کمانڈرس عصری اسلحہ سے آراستہ ہونے پر توجہ دیں ۔ سالانہ یونیفائیڈ کمانڈرس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے منوہر پاریکر نے کہا کہ حکومت نے مسلح افواج کو تمام عصری ہتھیار فراہم کرنے کا عہد کیا ہے لیکن انہوں نے یہ بھی کہاکہ اس کیلئے مالیتی احتیاط پسندی پر عمل کرنا بھی ضروری ہے اور تمام دستیاب وسائل کو روبہ عمل لایا جائے ۔ فوج کے ان تینوں شعبوں کواسلحہ و گولہ بارود کی طویل فہرست دی گئی ہے اور یہ شعبے نئے آبدوز کشتیوں کیلئے بندوقیں ‘ میزائلس ‘ جنگجوطیاروں کے بشمول کئی ہتھیاروں کے حصول کیلئے کوشاں ہیں ۔

ن ضروریات کی تکمیل کیلئے دستیاب مالیہ کو بھی ملحوظ رکھنا ضروری ہے ۔ حکومت اسلحہ خریدنے کیلئے تیار ہیں لیکن اس میں اُن اسلحہ کو خریدا جائے جنہیں ترجیح دی جاسکتی ہے ۔قبل ازیں چیف آف انٹیگریٹیڈ ڈیفنس اسٹاف کے چیرمین چیف آف اسٹاف کمیٹی ‘ ایئر مارشل پی پی ریڈی نے اہم تینوں خدمات کے مسائل پر ہونے والی پیشرفت کی رپورٹ پیش کی ۔ ایک روزہ طویل کانفرنس کے دوران ملک کو درپیش اہم سیکیورٹی مسائل کا جائزہ لیا گیا ۔ اس کیلئے حکمت عملی پر توجہ دی گئی ‘ فوجی کارروائیوں کیلئے منطقی اقدامات پر توجہ دی گئی ۔ مملکتی وزیر دفاع راؤ اندرجیت سنگھ ‘ قومی سلامتی مشیر اجیت دوئل اور ایئر چیف مارشل اروپ رہا کے علاوہ بحریہ کے سربراہ ایڈمیرل آر کے دھون ‘فوجی سربراہ جنرل دلبیر سنگھ بھی کانفرنس میں شریک تھے ۔

TOPPOPULARRECENT