Friday , June 22 2018
Home / شہر کی خبریں / مسلمان بابری مسجد سے ہرگز دستبردار نہیں ہوں گے

مسلمان بابری مسجد سے ہرگز دستبردار نہیں ہوں گے

کل تجارت کو بند رکھنے کا مشورہ ، تحریک مسلم شبان کا بیان

کل تجارت کو بند رکھنے کا مشورہ ، تحریک مسلم شبان کا بیان
حیدرآباد ۔ 4 ۔ دسمبر : ( پریس نوٹ ) : یوم شہادت بابری مسجد 6 دسمبر کو مسلمانان تلنگانہ و آندھرا پردیش خصوصی دعاؤں کا اہتمام کریں اور بند منائیں ۔ 6 دسمبر کا مسلم بند ملک کے حکمرانوں کو یہ احساس دلائے گا کہ 22 سال کے بعد بھی مسلمان اس زخم کو فراموش نہیں کیے ہیں اور بابری مسجد کی دوبارہ اسی مقام پر تعمیر کے مطالبہ سے مسلمان دستبردار نہیں ہوں گے ۔ ملک ہی نہیں ساری دنیا کے علماء کا شرعی فیصلہ ہے کہ مسجد اینٹ گارے چونے کا نام نہیں بلکہ اس مقام یا زمین کا نام ہوتی ہے جو اللہ کی عبادت کے لیے مسجد کے عنوان پر چھوڑی جاتی ہے ۔ ایکبار مسجد قائم ہوجائے تو تا قیامت یہ مسجد ہی رہے گی ۔ ظلم ، جبر ، تشدد کے آگے شریعت بدلتی نہیں اور نہ اللہ کا قانون بدلتا ہے ۔ تحریک مسلم شبان نے عامتہ المسلمین سے اپیل کی ہے کہ وہ 6 دسمبر بروز ہفتہ اپنے کاروبار بند رکھیں ۔ یاد رکھیں کہ ہندوستان میں مسلمان اپنے ملی اور مذہبی تشخص پر کوئی سمجھوتہ نہیں کرسکتے یہ ملک ان تمام کا ہے جو اس کے شہری ہیں ۔ حقوق کی لڑائی جہاں جمہوری حق ہے وہیں بابری مسجد کی لڑائی شرعی بھی ہے ۔ 93 ء کو تحریک مسلم شبان پہلے بند کا اعلان کیا تھا ۔ بعض لوگوں نے اس کا مذاق اڑایا تھا مگر ملت اسلامیہ کی بیداری نے انہیں مجبور کردیا کہ وہ بھی اس بند میں شامل ہوجائیں ۔ غیور ملت کے نوجوانوں کو 6 دسمبر کو جذبات کے بجائے اللہ سے رجوع ہونا ہے اور بند کو کامیاب بنانے کے لیے مسلم بھائیوں پرامن ترغیب دینا ہے ۔ صبر ، استقامت کے ساتھ رضائے رب کے لیے بابری مسجد جدوجہد میں شامل ہو کر یوم شہادت بابری مسجد منائیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT