Saturday , October 20 2018
Home / شہر کی خبریں / مسلم ، ایس ٹی تحفظات میں توسیع کے لیے ڈی ایم کے کی تائید پر کے سی آر کا اظہار تشکر

مسلم ، ایس ٹی تحفظات میں توسیع کے لیے ڈی ایم کے کی تائید پر کے سی آر کا اظہار تشکر

چیف منسٹر تلنگانہ کے موقف کی ستائش ، ٹی آر ایس و ڈی ایم کے سے مشترکہ جدوجہد کا عزم
حیدرآباد ۔ 27 ۔ نومبر : ( سیاست نیوز ) : چیف منسٹر تلنگانہ کے سی آر نے مسلم ایس ٹی تحفظات میں توسیع کرنے کے لیے انہیں ڈی ایم کے کی تائید حاصل ہونے پر ڈی ایم کے کے ورکنگ پریسیڈنٹ اسٹالن کو فون کرتے ہوئے اظہار تشکر کیا ۔ واضح رہے کہ تلنگانہ حکومت نے اسمبلی میں ایک قرار داد منظور کرتے ہوئے بی سی ۔ ای اور ایس ٹی تحفظات میں توسیع کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے مرکز کو مکتوب روانہ کیا ۔ حالت کے لحاظ سے بی سی ۔ ایس سی ۔ ایس ٹی طبقات کے تحفظات میں توسیع دینے کے ریاستوں کو اختیارات سونپ دینے کا بھی مرکز سے مطالبہ کیا تھا ۔ چیف منسٹر نے مرکز سے مثبت ردعمل حاصل نہ ہونے پر دہلی کے جنتر منتر پر دھرنا دینے اور سپریم کورٹ سے رجوع ہونے کی مرکز کو دھمکی دی تھی ۔ ڈی ایم کے پارٹی کے ورکنگ پریسیڈنٹ اسٹالن نے کل چیف منسٹر تلنگانہ کو مکتوب روانہ کیا ۔ پسماندہ طبقات کے تحفظات میں توسیع کے لیے ان کے موقف کی ستائش کی اور کہا کہ سماجی انصاف کے لیے تحفظات میں توسیع کی ڈی ایم کے ابتداء سے تائید کررہی ہے ۔ جس کی وجہ سے ٹاملناڈو میں تحفظات کا تناسب 69 فیصد تک پہونچ گیا ہے ۔ مکتوب وصول ہونے پر چیف منسٹر کے سی آر نے آج اسٹالن کو ٹیلی فون کیا ریاستوں کے حقوق کے لیے کی جانے والی جدوجہد میں اسٹالن کی تائید حاصل ہونے پر اظہار تشکر کرتے ہوئے سماجی انصاف کے لیے تحفظات کی توسیع کے لیے ایک دوسرے کے ساتھ مشترکہ تعاون و تال میل کرتے ہوئے آگے بڑھنے کا تیقن دیا ۔ اسٹالن نے ڈی ایم کے کے سربراہ کروناندھی کی جانب سے تحفظات توسیع کے لیے اظہار یگانت کرنے اگر دہلی کے جنترمنتر پر احتجاج دھرنا کرتے ہیں تو اس میں بھی شامل ہونے کا اسٹالن نے چیف منسٹر تلنگانہ کو تیقن دیا ۔کے سی آر نے کہا کہ ہندوستان کی تمام ریاستوں میں مختلف مذاہب ، ذات پات ، طبقہ کے غریب پسماندہ طبقات رہتے ہیں ان طبقات کو تحفظات فراہم کرنے یا موجودہ تحفظات میں توسیع کرنے کے لیے مرکز مکمل اختیارات ریاستوں کو سونپ دیں ۔ چیف منسٹر تلنگانہ نے کہا کہ وہ اس مسئلہ پر ملک کے مختلف ریاستوں کے چیف منسٹرس سے تبادلہ خیال کریں گے اور مرکز پر دباؤ بنانے کی پالیسی اختیار کریں گے ۔ ریاستی سطح کے تحفظات کے اختیارات ریاستوں کو حاصل کرنے کے لیے مہم چلانے کی حکمت عملی تیار کرنے پر بھی غور کررہے ہیں ۔ چیف منسٹر تلنگانہ نے کہا کہ سماجی انصاف کو یقینی بنانے اور پسماندہ طبقات کو تحفظات فراہم کرنے یا موجودہ تحفظات میں توسیع کرنے کے لیے دستور میں ترمیم ہی واحد راستہ ہے اس کے لیے وہ ہم خیال چیف منسٹرس سے مذاکرات بھی کریں گے ۔۔

TOPPOPULARRECENT