Monday , January 22 2018
Home / ہندوستان / مسلم قائدین ہی مسلمانوں کو ووٹ بینک سیاست کے گڑھے میں ڈھکیل رہے ہیں

مسلم قائدین ہی مسلمانوں کو ووٹ بینک سیاست کے گڑھے میں ڈھکیل رہے ہیں

علیگڑھ۔ 13 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) آل انڈیا تنظیم انصاف نے سرکردہ مسلم تنظیموں اور قائدین پر مختلف سیاسی جماعتوں سے مسلم ووٹوں کا سوداکرنے کا الزام عائد کیا ہے۔ جنرل سکریٹری ایوب خاں نے کہا کہ حقیقت پسندانہ سماجی معاشی پروگرام پر مبنی منشور ِ مطالبات پیش کرنے کے بجائے مسلم پارٹیاں اور قائدین خود مسلمانوں کو ووٹ بینک سیاست کے گڑھے میں ڈ

علیگڑھ۔ 13 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) آل انڈیا تنظیم انصاف نے سرکردہ مسلم تنظیموں اور قائدین پر مختلف سیاسی جماعتوں سے مسلم ووٹوں کا سوداکرنے کا الزام عائد کیا ہے۔ جنرل سکریٹری ایوب خاں نے کہا کہ حقیقت پسندانہ سماجی معاشی پروگرام پر مبنی منشور ِ مطالبات پیش کرنے کے بجائے مسلم پارٹیاں اور قائدین خود مسلمانوں کو ووٹ بینک سیاست کے گڑھے میں ڈھکیل رہی ہیں۔ آل انڈیا تنظیم انصاف کی شاخیں ملک کی 18 ریاستوں میں پھیلی ہوئی ہیں

اور یہ اقلیتوں کیلئے مختلف سرکاری اسکیمات پر موثر عمل آوری کے ضمن میں سرگرم ہے۔ ایوب خاں نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ 15 مارچ کو نئی دہلی میں قومی عاملہ اجلاس منعقد کیا جارہا ہے جس میں منشورِ مطالبات تیار کیا جائے گا اور اسے مختلف سیاسی جماعتوں سے رجوع کیا جائے گا۔ انہوں نے بتایا کہ تنظیم کی جانب سے کئے گئے سروے میں یہ انکشاف ہوا ہے کہ کئی ریاستی حکومتوں نے مختلف مرکزی اسکیمات کیلئے مختص فنڈس محض اس لئے واپس کردیئے کہ انہیں ان اسکیمات پر عمل آوری میں کوئی دلچسپی نہیں ہے۔

سبرتا رائے کی درخواست ضمانت مسترد
نئی دہلی۔ 13 مارچ ( سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے سہارا گروپ سربراہ سبرتا رائے کی درخواست ضمانت کو قبول کرنے سے انکار کردیا ہے ۔ سہارا گروپ عدالت میں سرمایہ کاروں کے 20,000 کروڑ روپئے واپس کرنے کوئی نئی تجویز پیش نہیں کرسکا جسکے بعد انکی درخواست ضمانت مسترد کردی گئی ۔ عدالت نے کہا کہ جب سہارا گروپ کی جانب سے سرمایہ کاروں کی رقم واپس کرنے نئی تجویز پیش کی جائیگی تب درخواست ضمانت پر غور کیا جائیگا ۔ سپریم کورٹ میں گروپ نے تجویز پیش کی تھی کہ وہ فی الحال 2,500 کروڑ روپئے ادا کریگا اور مابقی رقم اقساط میں ادا کردی جائیگی ۔ یہ تجویز پہلے بھی مسترد کی جاچکی ہے ۔ جیٹھ ملانی نے کہا تھا کہ ان کے موکل کو ہولی کے پیش نظر ضمانت دی جانی چاہئے ۔

TOPPOPULARRECENT