Wednesday , September 19 2018
Home / عرب دنیا / مسلم ممالک مائنمار سے سفارتی تعلقات منقطع کرلیں : جماعت اسلامی

مسلم ممالک مائنمار سے سفارتی تعلقات منقطع کرلیں : جماعت اسلامی

وزیراعظم نواز شریف سے اسلامی کانفرنس کے انعقاد کا مطالبہ

وزیراعظم نواز شریف سے اسلامی کانفرنس کے انعقاد کا مطالبہ
اسلام آباد ۔ 15 جون (سیاست ڈاٹ کام) پاکستان کی جماعت اسلامی نے آج مائنمار کے روہنگیا مسلمانوں کی حالت زار اور ان پر جاری ظلم و ستم کی شدید مذمت کی اور مطالبہ کیا کہ تمام مسلم ممالک کو مائنمار کے ساتھ سفارتی تعلقات منقطع کردینے چاہئے۔ جب تک مسلم ممالک بطور احتجاج ایسا نہیں کریں گے، ظلم و ستم کا یہ سلسلہ کبھی ختم نہیں ہوگا۔ جماعت اسلامی کے سربراہ سراج الحق نے اسلام آباد میں ایک ریالی سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نواز شریف سے خواہش کی کہ وہ موصوف ایک اسلامی کانفرنس کا انعقاد کریں اور نہ صرف روہنگیا مسلمان بلکہ پوری دنیا کے مسلمانوں کے تحفظ کیلئے ایک مشترکہ حکمت عملی وضع کریں۔ ڈان آن لائن نے یہ رپورٹ دی۔ انہوں نے کہا کہ مائنمار میں روہنگیا مسلمانوں کو جس طرح اذیتیں دی جارہی ہیں ان کا ہم تصور بھی نہیں کرسکتے۔ تاہم اب تک نام نہاد تہذیب و تمدن کے علمبردار اور ہیومن رائٹس واچ ڈرگس نے مجرمانہ خاموشی اختیار کر رکھی ہے۔ وہ لوگ جو جانوروں کے حقوق کیلئے واویلا مچاتے ہیں ایسا معلوم ہوتا ہے کہ انہیں روہنگیا مسلمانوں کو زندہ جلادیئے جانے اور ان کی خواتین کی عصمت ریزی کرنے کے واقعات نہ ہی سنائی دے رہے ہیں اور نہ ہی دکھائی دے رہے ہیں۔ یہ تمام لوگ اندھے اور بہرے ہوچکے ہیں۔ سینکڑوں مرد و خواتین اور بچوں کو گاجرمولی کی طرح کاٹ دیا گیا لیکن دنیا کے کسی گوشے سے بھی کوئی احتجاج نہیں ہوا۔ نہ تو اقوام متحدہ نہ کوئی احتجاج کیا اور نہ ہی آرگنائزیشن آف اسلامک کوآپریشن (OIC) نے کوئی آواز اٹھائی۔ ایسا لگتا ہے کہ ان کو مائنمار میں ہونے والے خون خرابہ سے کوئی سروکار نہیں۔ ظلم کے خلاف خاموشی اختیار کرنا بھی گنا ہے لہٰذا اب وقت آ گیا ہیکہ حکومت پاکستان بھی اس معاملہ میں پیشرفت کرے۔ اس موقع پر روہنگیا قائد عبداللہ معروف اور جماعت اسلامی کے نائب سربراہ میاں محمد اسلم نے بھی ریالی سے خطاب کیا۔

TOPPOPULARRECENT