Monday , November 20 2017
Home / شہر کی خبریں / مسلم پروفیسر کا عثمانیہ یونیورسٹی کے رجسٹرار آفس کے روبرو دھرنا

مسلم پروفیسر کا عثمانیہ یونیورسٹی کے رجسٹرار آفس کے روبرو دھرنا

حیدرآباد ۔ 21 ۔ اگست : ( پریس نوٹ ) : عثمانیہ یونیورسٹی کے رجسٹرار نے اپنے مبینہ متعصبانہ رویہ کو برقرار رکھتے ہوئے یونیورسٹی کے ایک پروفیسر کے ساتھ محض مسلم ہونے کی وجہ سے ملنے سے صاف انکار کررہا ہے ۔ پروفیسر محمد انصاری جو شعبہ لسانیات کے صدر بھی ہیں جنہیں رجسٹرار سرکاری مراعات سے مبینہ محروم کرنے کی کوشش میں لگا ہوا ہے اور یونیورسٹی ایکٹ دفعہ 19(5)iii کو خاطر میں نہیں لارہا ہے ۔ کئی دفعہ اسٹیٹ میناریٹی کمیشن ، پروفیسر انصاری کے کیس کے متعلق وضاحت طلب کرنے پر بھی اس نے ٹال مٹول کے رویہ کو اپنایا ہے ۔ اور اقلیتی کمیشن کو گمراہ کررہا ہے ۔ اس لیے پروفیسر محمد انصاری نے اپنے رفقاء کے ساتھ یونیورسٹی رجسٹرار آفس کے روبرو دھرنا منظم کیا ۔ اس دھرنے میں یونیورسٹی کے کئی مسلم طلباء نے حصہ لیا ۔ عصر حاضر میں ستم ظریفی یہ ہے کہ یونیورسٹی میں اقلیتی سیل کے انچارج ڈائرکٹر اکبر علی خاں ، سابق وائس چانسلر تلنگانہ یونیورسٹی ہونے کے باوجود اقلیتی پروفیسر کے مسئلہ پر مبینہ طور پر توجہ نہیں دے رہے ہیں۔۔

TOPPOPULARRECENT