Tuesday , November 21 2017
Home / کھیل کی خبریں / مسل مانیا 2017 میں مصری خاندان سے اُمیدیں

مسل مانیا 2017 میں مصری خاندان سے اُمیدیں

حیدرآباد 23 فروری (سیاست ڈاٹ کام) مسٹر یونیورس چمپئن 2016 میں سلور میڈل حاصل کرنے والے حیدرآبادی بلڈر عیسیٰ مصری عالمی سطح پر مسلسل اپنی فتوحات کے جھنڈے گاڑ رہے ہیں اور اب وہ امریکہ میں مجوزہ مسل مانیا 2017 میں بھی ہندوستان کے لئے ایک اہم کامیابی کے لئے پُرعزم ہیں۔ ورلڈ نیچرل باڈی بلڈنگ چمپئن شپ میں 45 سالہ عیسیٰ مصری اپنے دو بیٹوں 21 سالہ احمد مصری اور 19 سالہ عثمان مصری کے ساتھ شرکت کررہے ہیں۔ 22 اور 23 جون کو منعقد شدنی اِن مظاہروں میں یہ بلڈر فیملی ہندوستان کے لئے فتوحات کے لئے پُرعزم ہے۔ اِس ضمن میں اظہار خیال کرتے ہوئے عیسیٰ مصری نے کہاکہ وہ گزشتہ 30 برسوں سے باڈی بلڈنگ میں مصروف ہیں اور یہ اِن کا شوق ہے۔ انھوں نے 9 مرتبہ مسٹر آندھراپردیش، 8 مرتبہ مسٹر تلنگانہ، 5 مرتبہ مسٹر ٹوئن سٹیز اور ایک مرتبہ چمپئنس آف حیدرآباد میں حصہ لیا ہے۔ مسٹر انڈیا 2009 ء میں انھیں برونز میڈل حاصل ہوا جبکہ 2016 میں مسٹر یونیورس کے مقابلوں میں انھوں نے سلور میڈل حاصل کیا۔ امریکہ میں ہونے والے مقابلے کی تفصیلات بتاتے ہوئے انھوں نے کہاکہ وہ 85 تا 100 کیلو گرام زمرہ میں شرکت کررہے ہیں جس کے لئے وہ اپنے دونوں بیٹوں کے ساتھ سخت محنت کررہے ہیں تاکہ ہندوستان کے لئے میڈل حاصل کیا جاسکے۔اِن کے بیٹے عثمان نے کہاکہ باڈی بلڈنگ اِن کا بھی شوق ہے جو انھوں نے اپنے والد سے سیکھا ہے۔ عثمان نے کہاکہ ہندوستان میں جب مسل مانیا منعقد ہوا تھا تو وہ ڈینگی سے متاثر تھے اور ڈاکٹروں کی ہدایت کے خلاف جاتے ہوئے نہ صرف اِس ایونٹ میں شرکت کی بلکہ تیسرا مقام بھی حاصل کیا تھا۔علاوہ ازیں احمد مصری نے کہاکہ وہ عالمی ایونٹ میں تلنگانہ کی نمائندگی کررہے ہیں اور ہندوستان کے لئے میڈل حاصل کرنے کے لئے پُرعزم ہیں۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT