Friday , November 24 2017
Home / Top Stories / مشتبہ آئی ایس آئی ایجنٹ کا گجرات فسادات سے تعلق

مشتبہ آئی ایس آئی ایجنٹ کا گجرات فسادات سے تعلق

الطاف قریشی کو 2002 ء کے فسادات میں گرفتارکیا گیا تھا ، پولیس کا دعویٰ
احمد آباد ۔ /5 مئی (سیاست ڈاٹ کام) گجرات پولیس نے آج کہا کہ ممبئی میں دو دن قبل گرفتار شدہ آئی ایس آئی کا مشتبہ ایجنٹ الطاف قریشی 2002 ء کے گجرات فسادات کے دوران ضلع راجکوٹ کے دھوراجی ٹاؤن میں بھی گرفتار کیا گیا تھا ۔ اترپردیش اور مہاراشٹرا کے انسداد دہشت گردی اسکواڈ (اے ٹی ایس) نے قریشی کو جنوبی ممبئی میں گرفتار کیا تھا ۔ بعد ازاں راجکوٹ پولیس نے گجرات سے اس کے رابطوں کی تحقیقات کا آغاز کیا تھا ۔راجکوٹ کے سپرنٹنڈنٹ پولیس انتریپ سود نے کہا کہ 37 سالہ قریشی پاکستانی جاسوس ادارہ آئی ایس آئی کیلئے کام کرنے کا ملزم ہے جس کو 2002 ء میں گرفتار کیا گیا تھا اور دھوراجی ٹاؤن میں فسادات کے ایک مقدمہ میں اس کے خلاف چارج شیٹ پیش کی گئی تھی ۔ سود نے مزید کہا کہ ’’ماضی کا ریکارڈ دیکھنے کے بعد ہمیں پتہ چلا کہ اس کو فسادات کے مقدمہ اور دھوراجی میں فرقہ وارانہ تشدد کے ایک واقعہ کے دوران اقدام قتل پر چارج شیٹ بھی پیش کیا گیا تھا ۔ وہ ہجوم کا ایک حصہ تھا جس نے املاک کو نقصان پہونچایا تھا ‘‘ ۔ دھوراجی الطاف قریشی کا آبائی ٹاؤن ہے اور اس کا خاندان ہنوز اس ٹاؤن میں زندگی گزار رہا ہے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT