Wednesday , December 19 2018

مشن کاکتیہ کے تمام تالابوں کی مرمت و ترقی کا منصوبہ

میدک /23 مارچ ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) ریاستی حکومت تلنگانہ کی ہمہ جہتی ترقی کے ساتھ زرعی مقاصد میں ترقی اور زراعت پیشہ افراد کے چہروں پر مسکراہٹ دیکھنے کی پابند ہے ۔ جس کیلئے حکومت نے اختراعی پروگرام مشن کاکتیہ کا احیاء عمل میں لاتے ہوئے ریاست کو سرسبز شاداب بنانے کیلئے سنجیدہ ہے ۔ مشن کاکتیہ کے تحت ریاست کے تمام تالابوں کی مرمت و ترقی د

میدک /23 مارچ ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) ریاستی حکومت تلنگانہ کی ہمہ جہتی ترقی کے ساتھ زرعی مقاصد میں ترقی اور زراعت پیشہ افراد کے چہروں پر مسکراہٹ دیکھنے کی پابند ہے ۔ جس کیلئے حکومت نے اختراعی پروگرام مشن کاکتیہ کا احیاء عمل میں لاتے ہوئے ریاست کو سرسبز شاداب بنانے کیلئے سنجیدہ ہے ۔ مشن کاکتیہ کے تحت ریاست کے تمام تالابوں کی مرمت و ترقی دینے کا منصوبہ رکھتی ہے ۔ جس کیلئے حکومت 2081 کروڑ روپء مختص رکھا ہے ۔ ریاستی وزیر آبپاشی مسٹر ٹی ہریش راؤ میدک اور منڈل کے مختلف مقامات کا دورہ کرتے ہوئے مختلف ترقیاتی کاموں کیلئے سنگ بنیاد رکھنے کے دوران ان خیالات کا اظہار کیا ۔ انہوں نے کہا کہ میدک منڈل کے شمناپور تالاب کی ترقی اور یہاں برج کی تعمیر کیلئے 25 لاکھ صرف کئے جائیں گے اور میدک کے گھن پور آیاکٹ پراجکٹ کو مزید اونچا کرنے کیلئے 50 لاکھ صرف کئے جائیں گے ۔ ان کے ہمراہ رکن اسمبلی میدک و ریاستی قانون ساز اسمبلی کی ڈپٹی اسپیکر محترمہ ایم پدما دیویندر ریڈی ، ریاستی سکریٹری ٹی آر ایس مسٹر دیویندر ریڈی ، پرنسپل سکریٹری محکمہ زراعت پونم مالکنڈیا ، ضلع کلکٹر میدک مسٹر راہول بوجیا بھی تھے ۔ وزیر آبپاشی نے اپنے دورہ میدک کے موقع پر میدک ٹاون کے مضافات جانکم پلی کا بھی دورہ کیا جہاں انہوں نے محبوب نہر ، فتح نہر ، کنالس پر جاری سی سی لائٹنگ کے کاموں کا معائنہ کیا ۔ انہوں نے یہاں موجود اریگیشن انجینئیرس کو ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ مشن کاکتیہ کے تحت جاری تمام کام میں سرعت پیدا کریں اور متعلقہ کنٹراکٹرس کو بھی انہوں نے جنکی خطوط پر کاموں کو ا نجام دینے کی ہدایت کی ۔ ریاستی وزیر آبپاشی نے مزید کہا کہ میدک ٹاون کو یقینی طور پر ضلع ہیڈ کوارٹر کا درجہ دیا جائے گا ۔ جس کیلئے سب سے پہلے ٹاون کو ضلع مستقر کے لائف بنایا جائے گا ۔ جس کیلئے ایک کروڑ کی لاگت سے ٹاون کے اندرونی سڑکوں گلیوں کو ترقی دی جائے گی ۔ سائیڈ ڈرینس تعمیر کئے جائیں گے ۔ اس طرح انہوں نے ان کاموں کی انجام دہی کیلئے سنگ بنیاد رکھا اور 50 لاکھ کے صرفے سے مجلس بلدیہ کی عمارت پر میٹنگ ہال بھی تعمیر کیلئے بھی انہوں نے سنگ بنیاد رکھا ۔ انہوں نے میدک کو ترقی دینے کیلئے تاریخی قلع پر موجود ہریتا ریسٹورنٹ ( مبارک محل ) پر سرکاری عہدیداروں اور صدرنشین بلدیہ معہ کونسلرس ایک اجلاس بھی منعقد کیا ۔ انہوں نے تمام عوامی منتخب عہدیداروں پر زور دیتے ہوئے کہا کہ اپنے اپنے حلقوں میں ترقیاتی کاموں کے انجام دہی کے علاوہ عوام کے دیگر مسائل کے حل کیلئے بھی سعی کریں ۔ ہریش راؤ نے کہا کہ میدک کے تالابوں کو سندر ، پٹلم تالاب کو جوڑتے ہوئے منی ٹینک ، بنڈ تعمیر کیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا کہ مشن کاکتیہ کے کاموں کی انجام دہی کیلئے مرکز سے مزید ایک ہزار کروڑ کی اجرائی کا مطالبہ کیا گیا ہے ۔ اسی طرح 3 ہزار کروڑ ورلڈ بینک سے 3 ہزار رکروڑ جیاک فنڈ بھی آنے کی توقع ہے ۔ قبل ازیں ریاستی وزیر آبپاشی کے میدک منڈل کے مختلف مقامات پر 31 کروڑ کی لاگت سے انجام دئے جانے والے کاموں کا سنگ بنیاد رکھا ۔ وزیر آبپاشی نے مزید کہا کہ عنقریب میں ریاست کے تمام بلدیات میں انجینئیرس ، سنیٹری انسپکٹرس ٹاون پلاننگ آفیسروں کے علاوہ دیگر عملہ کی بھرتی عمل میں آئے گی ۔ بعد ازاں وزیر موصوف کے ہاتھوں این ڈی ایس ایل میدک کے گنا کاشتکاروں میں 3 کروڑ 28 لاکھ کے چیکس تقسیم کئے ۔ اس موقع پر آر ڈی او میدک مسٹر ایم ناگیش تحصیلدار ، ایم وجئے لکشمی ، صدرنشین بلدیہ مسٹر اے ملکارجن گوڑ ، کمشنر بلدیہ مسٹر وینکٹیشم ، بلدی کونسلرس ، مدھوسدن راؤ ، انیل کمار ، جی گائیتری ، سید صادق ، ایم گنگادھر ، اسماء منیر ، آمینہ حمید ، اے چندراکلا ، دیواکر ، خواجہ محی الدین ، ایم اے سلام کے علاوہ ، لنگا ریڈی ، کرشنا ریڈی ، میر اصغر علی ، ٹی آر ایس قائدین سلیم بیگ پٹیل ، ایم اے حمید ، محمد غفار ، محمد مجیب ، محمد فاضل ٹاون پریسیڈنٹ بھی موجود تھے ۔ بلدی کونسل ہال میں ریاستی وزیر ہریش راؤ ایم ایل سی سدھاکر ریڈی کو تہنیت پیش کی گئی ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT