Wednesday , November 22 2017
Home / عرب دنیا / مصر میں نئی پارلیمنٹ کیلئے رائے دہی

مصر میں نئی پارلیمنٹ کیلئے رائے دہی

سخت حفاظتی انتظامات ، ہندوستانی برادری نے دسہرہ تقاریب منائی
قاہرہ۔18اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) مصری عوام ملک کے اولین پارلیمانی انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں ۔ 2013ء میں فوج نے مصر کے پہلے آزادانہ طور پر منتخب صدر کو اقتدار سے بیدخل کر کے حکومت پر قبضہ کرلیا تھا ۔ ایک سال بعد یہ انتخابات منعقد کئے جارہے ہیں ۔ بیرون ملک مقیم مصری شہریوں نے ہفتہ کے دن سے ہی ووٹ دینے شروع کردیا جو اتوار کے دن بھی جاری رہا ۔ 15 ریاستوں کیلئے دو روزہ رائے دہی کے ایک پروگرام میں یہ پہلا مرحلہ تھا ۔مصر کے جڑواں شہروں قاہرہ اور جیزان  میں 22اور 23نومبر کو رائے دہی مقرر ہے۔ دیگر 13 ریاستوں میں بھی ان ہی دونوں تواریخ میں رائے دہی ہوگی ۔ کئی تجزیہ نگاروں اور مبصرین کو توقع ہے کہ رائے دہندوں کی بہت کم تعداد رائے دہی میں حصہ لے گی اور فوجی سے صدر بننے والے عبدالفتح السیسی کی پالیسیوں کی تائید کریں گے ۔ رائے دہی کے حفاظتی انتظامات کیلئے تین لاکھ ملازمین پولیس اور فوجی تعینات کئے گئے ہیں ۔ رائے دہی ایسے وقت ہورہی ہے جب کہ السیسی ملک کی بیمار معیشت کو تباہ ہونے سے بچانے کی سخت جدوجہد کررہے ہیں ۔

انہیں شورش پسندی اور جمہوری اپوزیشن دونوں کو اس مقصد کیلئے کچلنے کی ضرورت ہے ۔ مصر میں مقیم  ہندوستانی برادری کے ہزاروں ارکان نے آج روایتی گربا رقص کے ساتھ  دسہرہ کی رنگا رنگ تقریب کا اہتمام کیا ۔ 600سے زیادہ ارکان جن میں سے بیشتر اسکندریہ‘ ساحلی شہر پورٹ سعید اور اسلامیہ کی سیاحت پر آئے ہوئے تھے ۔ ہندوستانی برادری کی اسوسی ایشن برائے مصر کے زیراہتمام منعقدہ اس تقریب میں شامل ہوگئے ۔ رنگارنگ لباس جیسے ساڑیاں ‘ گھاگرا چولی ‘ کرتیا اور چوڑی دار ہر طرف نظر آرہے تھے ۔ ہندوستانی برادری کے ارکان نے گربا رقص کیا اور اس کی موسیقی کی دھنیں بجائی ۔ اس تقریب میں مصری عوام بھی شریک تھے ۔ کیونکہ جمعہ کے دن مصر میں تعطیل ہوتی ہے ۔مصری فنکاروں نے مولانا آزاد مرکز برائے ہندوستانی تمدن قاہرہ کے ارکان بھی لوک موسیقی اور روایتی ہندی گیتوں کی دھنوں پر رقص کرتے دکھائی دیئے ۔
ا سے دونوں ممالک کے عوام کے درمیان قربت کا اظہار ہوتا ہے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT