Friday , November 17 2017
Home / شہر کی خبریں / مصوری گرہست خواتین کیلئے روزگار کا ذریعہ

مصوری گرہست خواتین کیلئے روزگار کا ذریعہ

رنگ منجری سے انڈین آرٹ اینڈ کلچر کی چار روزہ تقاریب کا آغاز
حیدرآباد 27 اگسٹ (پریس نوٹ) گرہست خواتین کیلئے مصوری نہ صرف ان کی شوق کی تکمیل ہے بلکہ یہ خالی اوقات میں مصروفیت میں اضافہ کے ساتھ ساتھ روزگار کا ذریعہ بھی ہے جس کے لئے خواتین کو اسے اپنانا چاہئے۔ یہ بات محترمہ ایس وانی دیوی پرنسپل ایس وی کالج آف فائن آرٹ نے خواتین کی تنظیم رنگ منجری کے زیراہتمام صدرنشین محترمہ شویتا شکلا ’’کلا پارو‘‘ اے سلیبریشن آف انڈین آرٹ اینڈ کلچر کی تقاریب کے افتتاح کے موقع پر کہی۔ انھوں نے کہاکہ گھریلو خواتین کو اس پیشہ سے وابستہ ہونا چاہئے۔ محترمہ شویتا شکلا جو قدیم ملک پیٹ واقع یشودھا ہاسپٹل خواتین کے لئے مصوری کی تربیت کا وسیع ادارہ چلاتی ہیں، نے کہاکہ وہ خواتین میں مصوری کو عام کرنے کے لئے تربیت کے ساتھ ساتھ اسے روزگار سے بھی مربوط کررہی ہیں اور حکومت سطح پر سرٹیفکٹس کے لئے بھی کوشش کررہی ہیں کیونکہ اس پیشہ سے وابستہ خواتین کو سرکاری و خانگی اداروں میں کافی مواقع ہیں۔ تقریب میں ایم وی رمنا ریڈی صدر حیدرآباد آرٹ سوسائٹی، پرتھوی اوبرائے مشہور ناول نگار و فلم میکر ممبئی، چیریل آرٹ کے قومی ایوارڈ یافتہ وائی کنٹم ناکیش نامور سنگ تراش مرلیدھر کروپ، پی چندرشیکھر مرز اینڈ مسٹر سری سوامی ، پیڈی لائٹ کرئیٹیو آرٹسٹ کے بی اندرا نے مہمانان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کی جبکہ کرن مائی نے استقبال کیا۔ 27 اگسٹ تک جاری ان تقاریب میں الکا ڈالمیا، گنٹی نائنی، جی جانکی، تیجا بائی، کے کرن مائی، لکشمی سیما ویدم، نروپم میدھا، نودیتا کڈمبی، پرسونا مرتی تروملا، پراوینا، شویتا شکلا، سری رنجنی گنیش، وی ہما مالنی، وی ودیا سریجا، اور ویبھا سنگھ کی مصوری و پینٹینگس رکھی گئیں۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT