Tuesday , September 25 2018
Home / ہندوستان / مظفر نگر فسادات : اسٹنگ دعوے کی اعظم خان کی تردید

مظفر نگر فسادات : اسٹنگ دعوے کی اعظم خان کی تردید

مظفر نگر 16 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) اترپردیش کے وزیر شہری ترقیات اعظم خان نے اِس بات کی تردید کی کہ اُنھیں 2013 ء کے مظفر نگر فسادات پھوٹ پڑنے سے پہلے کسی سرکاری عہدیدار نے اُنھیں طلب کیا تھا کیونکہ ایک ٹی وی چیانل کے اسٹنگ آپریشن میں وہ ملزم قرار دیئے گئے تھے۔ ریاستی اسمبلی کی قائم کردہ ایک کمیٹی کے اجلاس پر پیش ہوتے ہوئے اعظم خان نے کہ

مظفر نگر 16 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) اترپردیش کے وزیر شہری ترقیات اعظم خان نے اِس بات کی تردید کی کہ اُنھیں 2013 ء کے مظفر نگر فسادات پھوٹ پڑنے سے پہلے کسی سرکاری عہدیدار نے اُنھیں طلب کیا تھا کیونکہ ایک ٹی وی چیانل کے اسٹنگ آپریشن میں وہ ملزم قرار دیئے گئے تھے۔ ریاستی اسمبلی کی قائم کردہ ایک کمیٹی کے اجلاس پر پیش ہوتے ہوئے اعظم خان نے کہاکہ فرقہ وارانہ فسادات سے پہلے اِن کے خلاف اسٹنگ آپریشن کا دعویٰ بے بنیاد ہے۔ مبینہ طور پر اعظم خان نے پولیس عہدیداروں کو ہدایت دی تھی کہ دو مسلم ملزمین کے خلاف جن پر ہندوؤں کے قتل کا الزام تھا، کارروائی نہ کی جائے کیونکہ وہ اُن کی بہنوں کے ساتھ بدسلوکی کے خلاف احتجاج کررہے تھے۔ ذرائع کے بموجب سینئر سماج وادی پارٹی قائد نے کمیٹی کے اجلاس پر اپنا بیان درج کرواتے ہوئے کہاکہ اُن کا مظفر نگر فسادات میں کسی بھی قسم کا کوئی کردار نہیں ہے۔ اِس سوال پر کہ کیا اُنھوں نے فسادات سے پہلے پولیس عہدیداروں کو طلب کیا تھا اور اُنھیں 2 مسلمانوں کی رہائی کا حکم دیا تھا۔ ریاستی وزیر نے نفی میں جواب دیا۔ اُنھوں نے کہاکہ کمیٹی اُن کے موبائیل نمبر اور لینڈ لائن فون سے جو اُن کی رہائش گاہ پر نصب ہے، تفصیلات حاصل کرسکتی ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT