Wednesday , December 12 2018

مظفر پور تشدد کی سی بی آئی تحقیقات کا مطالبہ علیگڑھ مسلم یونیورسٹی کے طلباء کا موم بتی جلوس

علیگڑھ ۔ 22 ۔ جنوری : ( سیاست ڈاٹ کام ) : بہار کے ضلع مظفر پور میں فرقہ وارانہ تشدد کے خلاف علیگڑھ مسلم یونیورسٹی کے طلباء نے خاموش موم بتی جلوس نکالا ۔ صدر جمہوریہ پرنب مکرجی کو موسومہ ایک مکتوب ریالی کے منتظم سرسید میناریٹی فاونڈیشن نے یہ نشاندہی کی کہ ملک بھر میں گذشتہ چند ماہ فرقہ وارانہ نوعیت کے واقعات میں تشویشناک حد تک اضافہ ہوگی

علیگڑھ ۔ 22 ۔ جنوری : ( سیاست ڈاٹ کام ) : بہار کے ضلع مظفر پور میں فرقہ وارانہ تشدد کے خلاف علیگڑھ مسلم یونیورسٹی کے طلباء نے خاموش موم بتی جلوس نکالا ۔ صدر جمہوریہ پرنب مکرجی کو موسومہ ایک مکتوب ریالی کے منتظم سرسید میناریٹی فاونڈیشن نے یہ نشاندہی کی کہ ملک بھر میں گذشتہ چند ماہ فرقہ وارانہ نوعیت کے واقعات میں تشویشناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے ۔ فاونڈیشن کے صدر پرویز صدیقی نے بتایا کہ اگر تفرقہ پسند رجحانات کو نہیں روکا گیا تو ملک کو بھاری قیمت چکانی پڑے گی ۔ فاونڈیشن نے صدر جمہوریہ سے اپیل کی کہ اس معاملہ میں مداخلت کرتے ہوئے مظفر پور ہلاکتوں کی سی بی آئی تحقیقات کو یقینی بنایا جائے تاکہ حقائق کو منظر عام پر لایا جائے ۔ واضح رہے کہ ضلع مظفر پور کے موضع اجیت پور میں 18 جنوری کو پیش آئے فرقہ وارانہ جھڑپوں کے سلسلہ میں 14 افراد کو گرفتار کرلیا گیا ۔ جہاں پر ایک نوجوان کی نعش دستیاب ہونے کے بعد برہم ہجوم نے 9 مکانات کو نذر آتش کردیا جس میں 3 افراد زندہ جل گئے تھے ۔۔

TOPPOPULARRECENT