Friday , September 21 2018
Home / ہندوستان / معاشی ابتری کیلئے یو پی اے ذمہ دار : جیٹلی

معاشی ابتری کیلئے یو پی اے ذمہ دار : جیٹلی

اقلیتوں سے امتیاز کے اندیشے وزیر فینانس نے مستردکردئے

اقلیتوں سے امتیاز کے اندیشے وزیر فینانس نے مستردکردئے
نئی دہلی 10 جون ( سیاست ڈاٹ کام ) حکومت نے آج سابقہ یو پی اے اقتدار کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے اور کہا کہ اس نے ملک کو تباہ حالت میں چھوڑا ہے جہاں ترقی کی رفتار کم ہے اور غربت میں اضافہ ہوگیا ہے ۔ حکومت نے تاہم کہا ہے کہ ایک طاقتور وزیر اعظم نریندر مودی کے دور میں معیشت میں دوبارہ جان ڈالنے کی کوشش کی جائیگی ۔ وزیر فینانس ارون جیٹلی نے صدر جمہوریہ کے خطبہ پر تحریک تشکر مباحث میں مداخلت کرتے ہوئے اقتلیتوں کے ساتھ روا رکھے جانے والے سلوک کے تعلق سے بھی اندیشوں کو دور کرنے کی کوشش کی اور کہا کہ نئی حکومت جامعیت کے ساتھ کام کریگی اور کسی کے ساتھ امتیازی سلوک برتا نہیں جائیگا ۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کی جانب سے سماجی یکجہتی اور قومی سلامتی کیلئے مستحکم اقدامات کئے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ این ڈی اے کو عوام کی اعلی توقعات کی وجہ سے اقتدار حاصل ہوا ہے اور عوام کی توقعات سے حکومت پر کارکردگی دکھانے کیلئے اضافی بوجھ عائد ہوگیا ہے ۔ نریندر مودی کے اس بیان کا اعادہ کرتے ہوئے کہ ملک کی ترقی میں ریاستوں کی شراکت کا اہم رول ہوتا ہے ارون جیٹلی نے کہا کہ حکومت کی جانب سے ریاستوں کے مسائل کی یکسوئی کیلئے بھی انہیں اعتماد میں لیا جائیگا ۔ انہوں نے کہا کہ حکومت ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کرنے اقدامات کریگی کیونکہ اب ملک مایوسی کی سطح پر آگیا ہے اور گذشتہ دو سال میں پانچ فیصد سے بھی کم شرح سے ترقی ہوئی ہے ۔ انہوں نے ادعا کیا کہ ملک کے انتخابی نتائج خود ایک اہم سیاسی عنصر بن گئے ہیں۔ ایک بار پھر اندرون ملک اور بیرونی سرمایہ کاروں نے ہندوستان کی جانب دیکھنا شروع کردیا ہے ۔ ایسے میں ہم پر عوامی اعتماد کو بحال کرنے کی ذمہ داری ہے اور ہم اس ذمہ داری کو ایک موقع میں بدلنے کی کوشش کرینگے۔

TOPPOPULARRECENT