Sunday , July 22 2018
Home / اضلاع کی خبریں / معمولی بحث و تکرار کے بعد قاتلانہ حملہ

معمولی بحث و تکرار کے بعد قاتلانہ حملہ

 

دونوں جانب قریبی دو رشتہ دار شدید زخمی

کلواکرتی ۔ 17 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : کلواکرتی ڈیویژن کے اور کنڈھ پیٹ پولیس اسٹیشن کے احاطہ میں اور کنڈھ مقام پر کل شام کھیتوں میں کام کی تکمیل کے بعد اپنے اپنے کھیتوں سے گھروں کو منتقلی کے دوران معمولی بحث و تکرار کے مد مقابل افراد نے ان پر کلہاڑیوں اور سلاخوں سے قاتلانہ حملہ کیا ۔ ایس آئی بالا کرشنا کے مطابق محمد منصور اپنے کھیت میں کام کروا رہے تھے کہ بازو کھیت والے محمد جہانگیر اور ان کے بھائی اہلیہ اور فرزند چاروں افراد جو کہ اپنے کھیت میں زراعت کی گئی مونگ پھلی کے فصل ٹراکٹر میں لاد کر راستے سے ہٹ کر محمد منصور کے کھیت میں سے جس میں انہوں نے روئی کی کاشت کی ہوئی تھی ۔ ٹراکٹر لے کر جارہے تھے فصل کے برباد ہونے کا تذکرہ کرتے ہوئے محمد منصور ٹراکٹر کو لیجانے سے روک دہے تھے کہ ان چاروں افراد نے اچانک محمد منصور پر کلہاڑی اور پتھروں سلاخوں سے حملہ شروع کردیا قریب میں موجود منصور کے بڑے بھائی محمد سلطان اپنے بھائی کو بچانے کے لیے پہنچے تو ان چار افراد نے منصور کے بھائی محمد سلطان پر بھی حملہ کردیا جس کے سبب یہ دونوں بھائی شدید زخمی ہوگئے اور اپنی جان بچانے کے لیے وہاں سے دوڑ پڑے ۔ عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ مقام واقعہ پر دیکھنے سے پتہ چلتا ہے کہ یہ منصوبہ بند حملہ تھا جس کے ذریعہ اصل نشانہ محمد منصور تھا جس کو نظر میں رکھتے ہوئے یہ حملہ کیا گیا جس کے محمد منصور کو سر پر اور ہونٹ پر چار چار ٹانکے لگے ۔ محمد سلطان کو بھی سر پر چار ٹانکے لگیں ہیں ۔ جن کا علاج کلواکرتی گورنمنٹ ہاسپٹل میں علاج جاری ہے ۔ ایس آئی نے بتایا کہ کیس درج کرتے ہوئے تحقیقات کا آغاز عمل میں لایا گیا ہے جلد خاطیوں کے خلاف سخت اقدامات کے لیے گھر والوں نے ایس آئی سے درخواست کی جب کے سابق میں بھی ان افراد نے ایسا کئی مرتبہ جھگڑا اور گالی گلوج کرنے کی شکایت ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT