Sunday , December 17 2017
Home / کھیل کی خبریں / معین علی کا آل راؤنڈ مظاہرہ، افغانستان کو شکست

معین علی کا آل راؤنڈ مظاہرہ، افغانستان کو شکست

during the ICC World Twenty20 India 2016 Group 1 match between England and Afghanistan at Feroz Shah Kotla Ground on March 23, 2016 in Delhi, India.

انگلینڈ 85/7 کے بعد 142 تک پہنچنے میں کامیاب، معین 41* ۔ افغانستان 127/9 تک محدود
نئی دہلی ، 23 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) معین علی کے آل راؤنڈ مظاہرے کی بدولت آج انگلینڈ نے افغانستان کے خلاف آئی سی سی ورلڈ ٹی 20 کرکٹ میچ میں 15 رنز سے کامیابی حاصل کی اور ایونٹ میں پیش رفت کے اپنے امکانات کو روشن رکھا ہے۔ اوئن مورگن نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا انتخاب کیا جو ایک مرحلے پر بہت مہنگا ثابت ہورہا تھا جب انگلش ٹیم کو افغان بولروں نے 85/7 تک گھٹا دیا تھا۔ تاہم معین علی افغان ٹیم کیلئے بہت بڑی رکاوٹ بن گئے اور نہ صرف 41 ناٹ آؤٹ اسکور کرتے ہوئے انگلینڈ کو 142/7 تک پہنچایا بلکہ افغانستان کی جوابی اننگز میں 1/17 کے ذریعے کارگر بولنگ بھی کی جو افغان ٹیم کو 127/9 تک محدود رکھنے میں معاون ثابت ہوئی اور اس ایونٹ کی نوارد ٹیم کو 15 رنز سے شکست ہوگئی۔ انگلینڈنے اب تک تین میچ کھیل کر چار پوائنٹس حاصل کئے ہیں اور سیمی فائنل تک پہنچنے کیلئے اس کا امکان بڑھ گیا ہے۔ افغانستان کی ٹیم جو پہلی مرتبہ یہ ٹورنمنٹ کھیل رہی ہے، اس نے ابھی تک کوئی میچ نہیں جیتا۔ افغانستان کی اننگز کا آغاز ہی اچھا نہیں رہا اور پہلے اووروں میں اس کی اہم وکٹیں گر گئیں۔ افغانستان کے پہلے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی محمد شہزاد تھے جو صرف چار رنز بنا سکے۔ ان کی وکٹ انگلینڈ کی طرف سے ڈیوڈ ولی نے لی۔ دوسرا اوور انگلینڈ کی طرف سے کرس جارڈن نے پھینکا اور وہ بھی ایک کھلاڑی کو آؤٹ کرنے میں کامیاب رہے۔ آؤٹ ہونے والے کپتان اصغر ستنکزئی تھے۔ اس اوور میں نیلے رنگ کی ایک کٹی پتنگ میدان میں آ گری اور میچ کو روک کر اسے باہر لے جایا گیا۔ تیسرا اوور ڈیوڈ ویلی نے پھینکا اور اُس میں انھوں نے گلبدین نبی (0) کو آؤٹ کر دیا۔ گلبدین نبی شاٹ کھیلنا چاہ رہے تھے لیکن گیند بلے پر نہ آئی اور وہ کور میں کیچ آؤٹ ہو گئے۔ میچ کے آٹھویں اوور میں مورگن نے معین علی کی گیند پر راشد خان کا ایک زبردست کیچ پکڑ لیا اور یوں افغانستان کو چوتھا نقصان اٹھانا پڑا۔ اگلے اوور میں افغانستان کو ایک اور نقصان ہوا جب عادل رشید نے اپنے پہلے ہی اور میچ کے نویں اوور میں اپنی ہی گیند پر نور علی زردان کو آؤٹ کر دیا۔ اس وقت افغانستان کا اسکور صرف 39 رنز تھا۔ افغانستان کے بلے باز 15 اوورز ختم ہونے پر صرف 84/6 اسکور کرپائے تھے۔

قبل ازیں معین علی کی ذمہ دارانہ اننگز کی بدولت انگلینڈ نے افغانستان کے خلاف 20 اوور میں سات وکٹوں کے نقصان پر مجموعی طور پر 142 رنز بنائے ہیں۔ معین علی نے میچ کے آخری اووروں میں 33 گیندوں پر 41 رنز ایک ایسے وقت بنائے جب دوسری طرف سے انگلینڈ کی وکٹیں دھڑا دھڑ گر رہی تھیں اور اس کے سات کھلاڑی پویلین لوٹ چکے تھے۔ دوسری جانب سے ڈیوڈ ویلی (20*) نے بھی معین کا بھرپور ساتھ دیا۔ افغانستان کی طرف سے بائیں ہاتھ سے اسپن بولنگ کرنے والے حمزہ نے بولنگ شروع کی جب کہ انگلینڈ کی طرف سے جیمز ونس اور جیسن روئے نے بیٹنگ کا آغاز کیا۔ افغانستان کیلئے راشد خان نے اپنے چار اوورز میں 17 رنز دے کر دو وکٹ کئے۔ انھوں نے چار اوورز میں 14 گیندیں ایسی پھینکیں جن پر کوئی رن نہیں بن سکا۔

TOPPOPULARRECENT