Tuesday , May 22 2018
Home / کھیل کی خبریں / معین علی کو اسٹمپ آوٹ دینا ایشزکا نیا تنازعہ

معین علی کو اسٹمپ آوٹ دینا ایشزکا نیا تنازعہ

بریسبن ۔27 نومبر (سیاست ڈاٹ کام)انگلینڈ اور آسٹریلیا کے درمیان پہلے ایشز ٹسٹ میچ کے دوران ہی نئے تنازعہ سامنے آگیا ہے اور معین علی کو آؤٹ قرار دینے پر انگلش شائقین نے شدید غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے اسے ایک غلط فیصلہ قرار دیا ہے۔برسبین میں جاری پہلے ایشز سیریز کے پہلے ٹسٹ میچ کی دوسری اننگز میں مشکلات سے دوچار انگلش ٹیم کا اسکور 155 رنز تک پہنچا تو نیتھن لیون کی گیند کو معین علی سمجھنے میں ناکام رہے اور گیند وکٹ کیپر کے پاس پہنچی جنہوں نے وکٹیں بکھیر کر اسٹمپ کی اپیل کردی۔امپائر نے کافی دیر تک معائنہ کرنے کے بعد معین علی کو آؤٹ قرار دیا حالانکہ انتہائی بغور معائنے سے پتہ چل رہا تھا کہ انگلش آل راؤنڈر کے پیر کا معمولی سا حصہ لائن سے پیچھے تھا۔معین کو آؤٹ قرار دیے جانے پر انگلش شائقین نے انتہائی غم و غصے کا اظہار کرتے ہوئے اسے ایک غلط فیصلہ قرار دیا۔سابق آسٹریلیائی کپتان مائیکل کلارک نے فیصلے کو غلط قراردیتے ہوئے کہا کہ میرے خیال میں معین کے پیر کا کچھ حصہ وکٹ کے پیچھے تھا اور انہیں شک کا فائدہ دیا جانا چاہیے تھا۔انہوں نے کہا کہ یہ بات قابل ذکر ہے کہ میدان میں صرف ٹم پین واحد کھلاڑی تھے جنہوں نے اپیل کی لیکن دوسری جانب انگلش بیٹسمین بھی ناٹ آؤٹ رہنے کے حوالے سے پراعتماد تھے۔تاہم سابق عظیم لیگ اسپنر شین وارن نے ان سے اختلاف کرتے ہوئے فیصلے کو درست قرار دیا اور کہا کہ میرے خیال میں کوئی ایسی وجہ نہیں تھی کہ معین کو آؤٹ قرار نہیں دیا جاتا۔سابق کپتان مائیکل وان بھی ان کی رائے سے متفق نظر آئے اور امپائر کے فیصلے کو درست قرار دیا تاہم انہوں نے کہا کہ میں نے اپنی زندگی میں کریز کی اتنی موٹی لائن نہیں دیکھی۔کرکٹ کے قوانین کے تحت اگر بیٹسمین کے پیر، بیٹ یا جسم کا کچھ حصہ کریز کی لائن سے پیچھے نہ ہو تو اسے آؤٹ قرار دیا جا سکتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT