Tuesday , January 23 2018
Home / ہندوستان / مقامی پولیس جنوبی بستر میں انسداد نکسلائیٹس کارروائی کی مخالف تھی

مقامی پولیس جنوبی بستر میں انسداد نکسلائیٹس کارروائی کی مخالف تھی

رائے پور۔ 7؍دسمبر (سیاست ڈاٹ کام)۔ مقامی محکمہ سراغ رسانی نے مشورہ دیا تھا کہ جنوبی بستر کے جنگلات میں انسداد نکسلائیٹس کارروائیاں بڑے پیمانے پر نہ کی جائیں جہاں حال ہی میں انتہاپسندوں نے 14 جوانوں کو ہلاک کردیا ہے۔ مقامی محکمہ سراغ رسانی نے جغرافیائی پیچیدگیوں اور ماؤیسٹوں کے طاقتور ’جنتا سرکار‘ نیٹ ورک کا حوالہ دیتے ہوئے یہ مشو

رائے پور۔ 7؍دسمبر (سیاست ڈاٹ کام)۔ مقامی محکمہ سراغ رسانی نے مشورہ دیا تھا کہ جنوبی بستر کے جنگلات میں انسداد نکسلائیٹس کارروائیاں بڑے پیمانے پر نہ کی جائیں جہاں حال ہی میں انتہاپسندوں نے 14 جوانوں کو ہلاک کردیا ہے۔ مقامی محکمہ سراغ رسانی نے جغرافیائی پیچیدگیوں اور ماؤیسٹوں کے طاقتور ’جنتا سرکار‘ نیٹ ورک کا حوالہ دیتے ہوئے یہ مشورہ دیا ہے۔ یہ علاقہ گھنے جنگلات، پہاڑوں، ناقابل رسائی اور انتہائی کم آبادی والے 4 علاقوں پر مشتمل ہے۔ ڈورناپال سے کستارام اور بھیجی سے جاگر گنڈہ (سطح مرتفع گولاپلی) تک تقریباً 430 کیلو میٹر دارالحکومت سے دُور جنوبی بستر کی سمت واقع ہے، گزشتہ چار پانچ ماہ میں شورش پسندی سے متاثرہ بستر ڈیویژن کے مختلف علاقوں میں 300 سے زیادہ نکسلائیٹس کارکن ہتھیار ڈال چکے ہیں، لیکن جنوبی سکما کے علاقہ سے کسی نے ہتھیار نہیں ڈالے۔ اس علاقہ کے سوائے فوج تقریباً دیگر تمام ماؤیسٹوں کے گڑھ میں داخل ہوچکی ہے۔ گزشتہ تین ماہ کے دوران شدید مخالف نکسلائیٹس کارروائیاں کی گئی ہیں۔ مقامی اطلاعات کے بموجب گولاپلی سطح مرتفع کا علاقہ انتہائی کم آباد ہے

اور یہاں زیادہ تر فوجی قیام کرتے ہیں۔ پولیس کے مخبروں کی اطلاع کے بموجب اس علاقہ سے بار بار کی فوجی اپیلوں اور درخواستوں کا کوئی جواب نہیں ملا۔ مقامی عوامی نیم فوجی تنظیم اور سنگھم کے ارکان سے ہتھیار ڈال دینے اور اصل دھارے میں شامل ہوجانے کی اپیلیں کی گئی تھیں۔ قریبی علاقہ کے دیہاتوں کے مکھیا نکسلائیٹس کارکنوں کو ہتھیار ڈال دینے کی ترغیب دینے سے قاصر رہے جب کہ بستر کے علاقوں میں ایسا ہوچکا ہے۔ مخبروں نے نشاندہی کی کہ قبائیلیوں کے پاس اب بھی ’جنتا سرکار‘ پر یقین اور اعتماد برقرار ہے۔ جنوبی سکما کی ممنوعہ تنظیم نے یہ سرکار قائم کی ہے۔ اس علاقہ کے عوام بنیادی سہولتوں اور ترقیاتی کاموں سے ماؤیسٹوں کی خوفناک سرگرمیوں کی وجہ سے ہنوز محروم ہیں۔ علاوہ ازیں جغرافیائی پیچیدگیاں، کمزور سراغ رسانی اور دیگر کئی دفاعی عناصر کی بناء پر اس علاقہ میں مخالف نکسلائیٹس کارروائیاں نہ کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT