Sunday , December 17 2017
Home / دنیا / ملائیشیا میں خطبہ کے دوران ہندوستانی شخص کا امام کیساتھ ناروا سلوک

ملائیشیا میں خطبہ کے دوران ہندوستانی شخص کا امام کیساتھ ناروا سلوک

کوالالمپور ۔ 19 سپٹمبر۔(سیاست ڈاٹ کام) ملائیشیا میں ایک 31 سالہ ہندوستانی شخص کو جمعہ کے خطبہ کے دوران امام کو مبینہ طورپر طمانچہ رسید کرنے کی پاداش میں حراست میں لے لیا گیا ۔ پولیس کے مطابق اس شخص کی شبیر احمد خان کی حیثیت سے شناخت کی گئی ہے ۔ اس کا تعلق کشمیر سے بتایا گیا ہے اور وہ ہندوستانی شہری ہے ۔ اس شخص نے کوالالمپور کی جامع مسجد میں کل 37 سالہ امام کو طمانچہ رسید کردیا تھا۔ رائل ملائیشین پولیس کے مطابق یہ شخص خطبہ کے دوران تیزی سے آگے بڑھنے لگا ۔ امام محمد ذوہیری نے اعتراض کیا جس پر وہ سیدھے اُن کے قریب پہنچ گیا اور اُنھیں پیچھے ڈھکیل کر مائیکرو فون اپنے ہاتھ میں لے لیا ۔ بعد ازاں اُس نے امام و خطیب کو طمانچہ رسید کردیا ۔ تاہم مسجد کے اسٹاف نے فوری اس شخص کو اپنی تحویل میں لے کر ٹرافک پولیس کے حوالے کردیا ۔ بعد ازاں مسجد میں امام و خطیب نے اپنا خطبہ جاری رکھا ۔ یہ واضح نہیں ہوسکا کہ اس شخص نے ایسا رویہ کیوں اختیار کیا تھا ۔ پولیس کے مطابق ابتدائی تحقیقات میں اس مشتبہ شخص کا ذہنی توازن ٹھیک نہیں معلوم ہورہا ہے کیونکہ وہ مسلسل خود سے ہی باتیں کررہا تھا ۔

TOPPOPULARRECENT