Saturday , December 16 2017
Home / شہر کی خبریں / ملت فنڈ کے ذریعہ دو خواتین کی تدفین

ملت فنڈ کے ذریعہ دو خواتین کی تدفین

حیدرآباد ۔ 18ستمبر ( سیاست نیوز) جناب عامر علی خان نیوز ایڈیٹر ’’سیاست‘‘ کو پولیس راجندر نگر کا مراسلہ وصول ہوا جس میں مسلم برقعہ پوش خاتون کی نعش کی تدفین کی درخواست کی گئی جس کو راجندر نگر کے سنسان علاقہ میں قتل کیا گیاتھا ۔ پولیس نے مقدمہ درج کرنے کے بعد محمد سلیم نامی شخص کو گرفتار کرلیا اور ورثاکا پتہ نہ چلنے پرجناب زاہد علی خان ایڈیٹر ’’سیاست‘‘ سے رجوع ہوئے تاکہ اسلامی طریقے پر تدفین ہوسکے ۔ ورثاء کو جب اس قتل کا علم ہوا تو وہ دواخانہ عثمانیہ پہنچے اور نعش کے زیادہ دن رہنے کی وجہ وہ گھر لے جانے سے مجبور تھے اور ٹی آر ایس لیڈر سید محسن کے ساتھ مرحومہ کے والد محمد انور ان کے علاوہ محمد احمداللہ عرف نواز پاشاہ ‘ محمد اکبر ‘ محمد اختر ‘ غوث معین الدین اور محمد بشیر ادارہ سیاست پہنچ کر جناب زاہد علی خان صاحب سے تدفین کی درخواست کی ۔ اسی طرح ریلوے پولیس کاچیگوڑہ کا مراسلہ وصول ہوا اس میں بھی خاتون نعش کی تدفین کی درخواست تھی ۔ ان دونوں مسلم خاتون نعشوں کو دواخانہ عثمانیہ سے حاصل کر کے سکندرآباد کے قبرستان میں تدفین عمل میں لائی گئی ۔ نماز جنازہ مولانا سید حفیظ خطیب جامع مسجد محمدی کشن باغ نے پڑھائی ۔ مقتولہ کی شناخت نازیہ بیگم سے ہوئی اور ان کے والد محمد انورنے بتایا کہ اس ماہ میں میری بچی واپس سعودی جانے والی تھی ۔ سکندرآباد کی رہنے ولی بشری تبسم نے دونوں مرحومین کیلئے دعائے مغفرت کی اور کہا بلاشبہ ملت فنڈ میں تعاون کرنے والے قابل قدر ہیں ‘ اللہ پاک ان کو اجر عظیم عطا فرمائے اور جنہوںنے اس میں کسی طرح کی بھی مدد کی اللہ پاک ان کو اجر عطا فرمائے ۔ اللہ تعالیٰ جناب زاہد علی خان صاحب کی صحت اور حیات دونوں میں اضافہ فرمائے ۔ ( آمین ) ۔

TOPPOPULARRECENT