Saturday , December 15 2018

ملک میں سبز انقلاب سابق وزیر اعظم اندرا گاندھی کا عظیم کارنامہ

قومی سالمیت کمیٹی کے زیر اہتمام جلسہ : کیپٹن اتم کمار ریڈی ‘ محمد علی شبیر و دیگر کا خطاب
حیدرآباد 20 نومبر ( پریس نوٹ ) صدر تلنگانہ پردیش کانگریس این اتم کمار ریڈی نے سابق وزیراعظم اندرا گاندھی کو ان کی صد سالہ تقاریب کے موقع پر خراج عقیدت پیش کیا اور بتایا کہ وہ نہ صرف ہندوستان بلکہ دنیا کی طاقتور ترین خاتون قائد تھیں ۔ اتم کمار ریڈی تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی کے ہیڈکوارٹرس گاندھی بھون کے پرکاشم ہال میں قومی سالمیت کمیٹی کے زیر اہتمام منعقدہ اندرا گاندھی صد سالہ تقاریب کی اختتامی نشست سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کررہے تھے ۔ انہوں نے بتایا کہ اندرا گاندھی نے سبز انقلاب لایا تھا ۔ جس کے باعث ہندوستان میں بڑے پیمانہ پر زراعت شروع ہوگئی تھی ۔ اس طرح ہندوستان اناج کے معاملہ میں خود مکتفی ہوگیا ۔ رکن پارلیمنٹ کے وی پی رامچندر راؤ نے جو مہمان خصوصی تھے ہندوستان کو طاقتور بنانے میں اندرا گاندھی کے نمایاں رول کا تذکرہ کیا اور اسے ناقابل فراموش قرار دیا ۔ تلنگانہ قانون ساز کونسل میں اپوزیشن کے قائد محمد علی شبیر نے جو اعزازی مہمان تھے کہا کہ مرکز میں بی جے پی کی زیر قیادت این ڈی اے حکومت اور تلنگانہ میں ٹی آر ایس حکومت کی الٹی گنتی شروع ہوگئی ہے ۔ 2019 کے انتخابات میں مرکز اور ریاست میں کانگریس اقتدار پر واپس ہوگی ۔ صدر قومی سالمیت کمیٹی و جنرل سکریٹری تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی ایس کے افضل الدین نے صدارتی خطاب میں کہا کہ 2019 کے انتخابات کے بعد راہول گاندھی وزیراعظم بنیں گے اور اتم کمار ریڈی کو تلنگانہ کے چیف منسٹر بننے کا اعزاز حاصل ہوگا ۔ صدر گریٹر حیدرآباد یوتھ کانگریس انیل کمار نے بتایا کہ راہول گاندھی کی قیادت میں نوجوانوں میں کافی جوش و خروش پایا جاتا ہے ۔ میک ایویشین کے بانی سید منان اور سپرنٹنڈنٹ کسٹمس ڈپارٹمنٹ انور محی الدین نے بھی اعزازی مہمانوں کے طور پر شرکت کی ۔ سابق نائب صدر نشین مایناریٹی ڈپارٹمنٹ تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی محمد سراج الدین ، نائب صدرنشین تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی غیاث الدین اور سابق صدر مایناریٹی ڈپارٹمنٹ تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی ڈاکٹر اعجاز الزماں کے علاوہ این آر آئی ڈپارٹمنٹ تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی ڈاکٹر ونود کمار اور کانگریس و یوتھ کانگریس قائدین سید علی صادق ، کاظم حسین خان ، مختار مبین و کوثر جہاں نے بھی مخاطب کیا ۔

TOPPOPULARRECENT