Monday , June 25 2018
Home / ہندوستان / ملک میں فی کس دولت میں 4,650 ڈالرس تک اضافہ

ملک میں فی کس دولت میں 4,650 ڈالرس تک اضافہ

ممبئی 14 اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ گذشتہ 14 برس میں رئیل اسٹیٹ کاروبار ایک اہم وجہ رہا جس کے نتیجہ میں ملک میں بالغ آبادی کی فی کس دولت میں 4,650 ڈالرس تک اضٰافہ ہوگیا ہے جو روپئے میں 283,650 روپئے ہوتی ہے ۔ یہ اضافہ 2000 - 2014 کے درمیان ہوا ہے ۔ کریڈٹ سوئیز نے اپنی عالمی دولت رپورٹ 2014 میں یہ بات بتائی ہے اور کہا کہ روپئے ک

ممبئی 14 اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ گذشتہ 14 برس میں رئیل اسٹیٹ کاروبار ایک اہم وجہ رہا جس کے نتیجہ میں ملک میں بالغ آبادی کی فی کس دولت میں 4,650 ڈالرس تک اضٰافہ ہوگیا ہے جو روپئے میں 283,650 روپئے ہوتی ہے ۔ یہ اضافہ 2000 – 2014 کے درمیان ہوا ہے ۔ کریڈٹ سوئیز نے اپنی عالمی دولت رپورٹ 2014 میں یہ بات بتائی ہے اور کہا کہ روپئے کے حساب سے فی بالغ فرد دولت میں خاطر خواہ اضافہ ہوا ہے ۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ملک میں گھریلو دولت پراپرٹی اور دوسرے رئیل اسٹیٹ اثاثہ جات کے نتیجہ میں بہتر ہوئی ہے ۔ رپورٹ کے بموجب ملک میں ہر بالغ فرد پر فی کس قرض بھی گھٹ گیا ہے اور اب وہ صرف 315 ڈالر فی کس تک رہ گیا ہے ۔ رپورٹ کے بموجب 2007 تک فی کس دولت اور بڑھی تھی تاہم 2008 سے عالمی سطح پر ہوئے انحطاط کے نتیجہ میں اس میں معمولی سی کمی درج کی گئی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT