Saturday , December 15 2018

ملک کی اعلیٰ عدالتوں میں تحفظات کی ضرورت

دو روزہ سمینار، سابق جسٹس سپریم کورٹ کے راما سوامی کا خطاب

دو روزہ سمینار، سابق جسٹس سپریم کورٹ کے راما سوامی کا خطاب
حیدرآباد ۔ 10 مئی (سیاست نیوز) جسٹس کے راما سوامی سابق جسٹس سپریم کورٹ نے آج کہا کہ ہندوستان میں اعلیٰ عدالتوں میں ایس سی، ایس ٹی، او بی سی اقلیتی اور خواتین تحفظات کی ضرورت ہے۔ اعلیٰ عدالتوں میں تحفظات کی ضرورت پر دو روزہ سمینار سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے جسٹس کے راما سوامی نے ان خیالات کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ تحفظات دستوری حق ہے ناکہ کسی کی بھیک۔ انہوں نے کہا کہ آزادی کے 67 سال بعد بھی اعلیٰ عدالتوں میں تحفظات فراہم نہیں کئے گئے جبکہ بشمول پارلیمانی کمیٹی، کیداونڈا کمیٹی، نیشنل ایس سی کمیشن، نیشنل ویمن کمیشن، نیشنل بی سی کمیشن نے اعلیٰ عدالتوں میں تحفظات کی سفارش کرچکے ہیں۔ 14 ویں لاء کمیشن رپورٹ میں بھی اعلیٰ عدالتوں میں ایس سی، ایس ٹی، او بی سی اقلیتوں کی نمائندگی کی سفارش کی گئی ہے۔ ڈاکٹر جی ونود کمار پرنسپل و ڈائرکٹر پی جی کالج آف لا نے کہا کہ اے پی ہائیکورٹ میں موجودہ طور پر 22 ججس کا تعلق اعلیٰ ذات سے ہے۔ انہوں نے اس امر کو تنقید کا نشانہ بنایا کہ سوائے عدالتی نظام کے تمام محکمہ جات میں قانون حق معلومات پر عمل آوری ہورہی ہے۔ اس موقع پر نتین مشیرم سینئر ایڈوکیٹ سپریم کورٹ، پروفیسر وائی ایف جیا کمار ڈین فیاکلٹی آف لا تحتانیہ یونیورسٹی حیدرآباد نے بھی خطاب کیا۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT