Tuesday , December 18 2018

ملک کی ترقی، طلبہ و نوجوانوں کی ترقی کے بغیر ناممکن

ایس آئی او وفد کی جناب عامر علی خان سے ملاقات‘ ایس آئی او منشور کی پیشکشی

ایس آئی او وفد کی جناب عامر علی خان سے ملاقات‘ ایس آئی او منشور کی پیشکشی

حیدرآباد۔6اپریل ( راست ) اسٹوڈنٹس اسلامک آرگنائزیشن آف انڈیا ملک میں تقریباً 30سال سے طلباء و نوجوانوں کے بہتر مستقبل ‘ تعلیم و روزگار اور اخلاق کے خاطر مسلسل جدوجہد کرتی آرہی ہے اس لئے کہ ملک کی ترقی طلبہ و نوجوانوں کی ترقی کے بغیر ممکن نہیں ہے ۔ ایس آئی او نے اس ملک میں رہنے والے نوجوان طلبہ کے مسائل کو حل کیا ہے ‘ چاہے ان کے اقدار کا مسئلہ ہو یا ان کے روشن مستقبل یا ان کی تعلیمی مسائل اور ترقی کا معاملہ ہو اس کیلئے انصاف کیا جائے ۔ کریئر گائیڈنس کے ذریعہ ہر محاذ پر طلبہ کی رہنمائی کا کام کیا ‘ اب جبکہ سیاسی الیکشن کا دور دورہ ہے جو کہ ایک اہم محاذ ہے جس کے ذریعہ طلبہ و نوجوانوں کے مطالبات کو منوایا جاسکتا ہے ۔ ایسے میں ایس آئی او ان طلبہ و نوجوانوں کی ترقی روشن مستقبل کی خاطر انتخابی منشور جاری کیا ہے ۔ اس ضمن میں ایس آئی او وفد نے جناب عامر علی خان نیوز ایڈیٹر روزنامہ سیاست ‘ وائی ایس آر کانگریس قائد و کوآرڈینیٹر حلقہ پارلیمنٹ سکندرآباد قائد سے ملاقات کی اور انہیں ایس آئی او نے ’’ طلبہ کا انتخابی منشور 2014‘‘ حوالے کیا ۔ واضح رہے کہ جناب عامر علی خان ایک حرکیاتی شخصیت بن کر سیاسی اُفق پر ابھر رہے ہیں ‘

انہیں مسلم نوجوانوں کی تعلیمی ‘ معاشی ‘ سماجی پہلوں کو مضبوط کرنا بھی ہے ۔ برادر ابرار علی سکریٹری رابطہ عامہ کی قیادت میں ایس آئی او کے وفد نے انہیں یہ بھی بتایا کہ ایس آئی او کا پہلا نشانہ یہ ہے کہ اس ملک و ریاست میں اقدار پر مبنی تعلیم کو کیسے عام کیا جائے اور کس طرح روبہ عمل لایا جائے ۔ انہیں بتایا گیا کہ پلاننگ کمیشن 2011تا 2012ء کے ذریعہ ہندوستان بھر میں 12لاکھ اساتذہ کی ضرورت ہے ‘ اسے فوری پُر کیا جانا چاہیئے اور جی ڈی پی تعلیم پر جو صرف 4تا 5فیصد خرچ کررہی ہے ‘ بڑھ کر 8فیصد ہو ۔ لڑکیوں کی تعلیم پر زیادہ سے زیادہ آسانیاں فراہم کی جائیں اور حکومت کے اسکولس و کالجس کو کارپوریٹ کے انداز میں اسے ترقی دی جائے ۔ حکومت کی جانب سے ایک مانیٹرنگ باڈی ہو جو تعلیمی اداروں پر خرچ کرسکے اور وہ فیس کے مسئلہ پر قابو پاسکے ۔ اس موقع پر برادر محمد فضیل احمد اسسٹنٹ سکریٹری رابطہ عامہ ‘ برادر سید یونس کوآرڈینیٹر اسٹوڈنٹس سنٹر ‘برادر سید منہاج آفس سکریٹری موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT