Friday , November 24 2017
Home / Top Stories / ممتابنرجی نے عوام سے کئے ہوئے وعدے فراموش کردئے : راہول

ممتابنرجی نے عوام سے کئے ہوئے وعدے فراموش کردئے : راہول

انتخابات کے بعد مغربی بنگال میں کانگریس ۔ بائیں بازو کی حکومت قائم ہوگی ۔ کانگریس نائب صدر کا انتخابی ریلی سے خطاب
رگھوناتھ گنج ( مغربی بنگال ) 18 اپریل ( سیاست ڈاٹ کام ) ترنمول کانگریس کی سربراہ ممتابنرجی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کانگریس کے نائب صدر راہول گندھی نے آج کہا کہ انہوں نے چیف منسٹر بننے کے بعد اپنے وعدوں کو پورا نہیں کیا جس کی وجہ سے کانگریس پارٹی اسمبلی انتخابات میں ان کی مخالفت کر رہی ہے ۔ راہول گاندھی نے یہاں ایک انتخابی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پانچ سال قبل کانگریس نے ترنمول کانگریس کی تائید کی تھی کیونکہ ممتابنرجی نے تبدیلی لانے ‘ ترقی دلانے ‘ نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے اور لا اینڈ آرڈر کو بہتر بنانے کا وعدہ کیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ تاہم چیف منسٹر بننے کے ایک دن بعد ممتابنرجی بدل گئیں اور انہوں نے کانگریس سے اور ریاست کے عوام سے کئے گئے وعدوں کو فراموش کردیا ۔ انہوں نے کہا کہ ممتابنرجی نے وعدہ کیا تھا کہ وہ فیکٹریاں قائم کرینگی تاکہ نوجوانوں کو روزگار حاصل ہوسکے ۔ تاہم انہوں نے کوئی فیکٹری قائم نہیں کی اسی لئے ہم ان کی تائید نہیں کر رہے ہیں بلکہ انہیں شکست دینے کیلئے مقابلہ کر رہے ہیں۔ انہوں نے وزیر اعظم مودی کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ مودی نے بھی انتخابات کے دوران نوجوانوں کوروزگار فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا اسی لئے نوجوانوں نے انہیں ووٹ دیا لیکن نوجوانوں کو کوئی روزگار حاصل نہیں ہوا ۔ انہوں نے کہا کہ ممتابنرجی نے 70لاکھ نوجوانوں کو روزگار فراہم کرنے کا وعدہ کیا تھا لیکن ایک بھی ملازمت فراہم نہیں کی گئی ۔ انہوں نے نریندر مودی اور ممتابنرجی کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ دونوں نے کسانوں کیلئے کچھ بھی نہیں کیا ہے ۔ راہول گاندھی نے کانگریس ۔ بائیں بازو کے اتحاد کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ جب انتخابات کے بعد اس اتحاد کی حکومت قائم ہوگی تو ان لوگوں کے خلاف کارروائی کی جائیگی جو شردھا اسکام اور کرپشن میں ملوث ہیں۔ نوجوانوں کو روزگار فراہم کیا جائیگا اور بیڑی ورکرس کی مدد کی جائیگی ۔ کندی کے مقام پر ایک اور جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے راہول گاندھی نے کانگریس اور بائیں بازو کے ورکرس سے کہا کہ وہ متحدہ مقابلہ کریں۔ انہوں نے کہا کہ متحدہ مقابلہ کیا جائے ۔ وہ خود ورکرس کے ساتھ ہیں۔ انتخابات کے بعد ہماری مخلوط حکومت قائم ہوگی ۔ انہوں نے ترقیاتی اقدامات سے متعلق ممتابنرجی کے ادعا کو مسترد کردیا اور کہا کہ ممتابنرجی جن اقدامات کا تذکرہ کر رہی ہیں وہ در اصل یو پی اے حکومت کے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ممتابنرجی نے ریاست میں کرپشن کو ختم کرنے کا وعدہ کیا تھا لیکن جب ان کی ناک کے نیچے کرپشن کے واقعات ہوئے تب انہوں نے کوئی کارروائی نہیں کی ۔

TOPPOPULARRECENT