Friday , January 19 2018
Home / سیاسیات / ممتابنرجی کی وزیر اعظم کے بیرونی دوروں پر تنقید

ممتابنرجی کی وزیر اعظم کے بیرونی دوروں پر تنقید

بی جے پی کی جانب سے سی بی آئی کو استعمال کئے جانے کا الزام

بی جے پی کی جانب سے سی بی آئی کو استعمال کئے جانے کا الزام
کولکتہ 13 اپریل ( سیاست ڈاٹ کام ) اب جبکہ وزیر اعظم نریندر مودی سہ قومی بیرونی دورہ پر گئے ہوئے ہیں چیف منسٹر مغربی بنگال ممتابنرجی نے آج ان کے مسلسل بیرونی دوروں پر سوال کیا ہے اور کہا کہ انہیں پہلے اپنے ملک اور یہاں کے عوام کو جان لینا چاہئے ۔ ممتابنرجی نے یہاں بلدی انتخابات کے سلسلہ میں منعقدہ ایک ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وہ ایک اچھی سرکار کے سربراہ ہیں لیکن یہ اچھی سرکار کا وطیرہ ہے کہ گذشتہ نو مہینوں میں انہوں نے 11 بیرونی دورے کئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انہیں مودی کے بیرونی دوروں سے کوئی مسئلہ نہیں ہے لیکن اگر وہ بیشتر وقت بیرونی دوروں میں گذاریں تو ملک کی فکر کون کریگا ۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم کو چاہئے کہ وہ پہلے سارے ملک کو جان لیں لیکن ایسا لگتا ہے کہ انہیں اس میں کوئی دلچسپی نہیں ہے ۔ ممتابنرجی نے وزیر اعظم پر حصول اراضیات بل پر دروغ گوئی کا الزام عائد کیا اور کہا کہ وہ اس مسئلہ پر قوم اور کسانوں کو گمراہ کرنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جب ہم نے حصول اراضیات بل کے خلاف احتجاج کیا تو وہ دعوی کرتے ہیں کہ انہوں نے کسانوں کیلئے بہت کچھ کیا ہے ۔ یہ سب کچھ جھوٹ ہے ۔ یہ صرف پراجیکٹس کے نام تبدیل کررہے ہیں اور فرقوں کے مابین فرقہ وارانہ تشدد میں ملوث ہو رہے ہیں۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ بی جے پی ‘ سی بی آئی کو استعمال کرتے ہوئے ترنمول کانگریس کا امیج متاثر کرنا چاہتی ہے ۔ انہوں نے سوال کیا کہ سی بی آئی کس طرح بی جے پی کی ایما پر کام کرسکتی ہے ؟ ۔ حکومت الگ ہے اور پارٹی الگ ہے ۔ انہوں نے بی جے پی پر متضاد بیانی کا الزام بھی عائد کیا اور کہا کہ ریاستی و مرکزی یونٹ کا موقف علیحدہ ہے ۔

TOPPOPULARRECENT