Thursday , November 15 2018
Home / Top Stories / مناسک حج کی تکمیل کیساتھ عیدالاضحی کا آغاز

مناسک حج کی تکمیل کیساتھ عیدالاضحی کا آغاز

وادیٔ منیٰ میں حجاج کرام کا رمی جمار، توبہ استغفاراور رقت انگیز دعائیں

منیٰ 21 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام) ارض مقدس مکہ معظمہ میںبشمول ہند اقطاع عالم کے 20 لاکھ مسلمانوں نے آج مناسک حج کی تکمیل کے ساتھ عیدالاضحی منائی۔ حجاج کرام نے منگل کو منیٰ میں سنت ابراہیمیؑ کی پیروی کرتے ہوئے علامتی شیطان کو کنکریاں مارنے کا سلسلہ جاری رکھا۔ اس شیطان ملعون و مردود نے اللہ کے فرمانبردار بندہ اور پیغمبر اسلام حضرت سیدنا ابراہیم علیہ السلام کو رضائے الٰہی کیلئے اپنے لخت جگر حضرت سیدنا اسمٰعیل علیہ السلام کی قربانی دینے کے احکام پر تعمیل سے روکنے کی ناکام کوشش کی تھی۔ مسلمانوں کا عقیدہ ہے کہ حضرت ابراہیمؑ کو اپنے لخت جگر کی قربانی کا حکم دیتے ہوئے اللہ تعالیٰ نے اپنے محبوب پیغمبر کے ایمان کی آزمائش کی تھی اور وہ اپنے مالک و معبود کے فرمانبردار بندہ کی حیثیت سے آنکھوں پر پٹی باندھ کر حکم خداوندی پر تعمیل کے لئے تیار ہوگئے۔ اللہ کو اپنے بندہ کی یہ ادا بہت پسند آئی، رحمتِ خداوندی کو جوش آگیا چنانچہ اللہ تعالیٰ نے جنت سے ایک دنبہ اس مقام پر پہونچادیا۔ خالق کائینات کے حکم پر حضرت ابراہیمؑ نے تعمیل کردی اور آنکھوں سے پٹی اُتارنے کے بعد قدرت کا یہ معجزہ دیکھ کر حیرت و خوشی کی انتہا نہ رہی کہ اللہ تعالیٰ نے قربانی بھی قبول کرلیا اور اپنی قربانی کیلئے بخوشی راضی حضرت اسمٰعیلؑ کو بھی بچالیا۔ یہ معجزہ تاقیامت اللہ کے فرمانبردار بندوں پر اللہ کے انعام و رحمت کی ایک مثال بن گیا اور اس عظیم واقعہ کی یاد میں ہر سال آج کے دن دنیا بھر کے مسلمان دنبوں، بکروں، اونٹوں یا مویشیوں کی قربانی کے ذریعہ خاتم الانبیاء حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ و سلم اور آپؐ کے اجداد اکرام حضرت سیدنا ابراہیم علیہ السلام اور حضرت سیدنا اسمٰعیلؑ کی سنت کی پیروی کے ساتھ اپنے مالک و معبودِ حقیقی کی فرمانبرداری کے غیر متزلزل عہد کا اظہار کرتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT