Monday , October 22 2018
Home / Top Stories / مندروں اور پجاریوں کیلئے 672 کروڑ

مندروں اور پجاریوں کیلئے 672 کروڑ

مکہ مسجد اور شاہی مسجد کیلئے محض 7 کروڑ

حیدرآباد ۔ 15 ۔مارچ (سیاست نیوز) ٹی آر ایس حکومت تمام طبقات کی یکساں ترقی کے بلند بانگ دعوے کرتی ہے لیکن اسمبلی میں پیش کردہ بجٹ میں اقلیتوں کے ساتھ ناانصافی کا مظاہرہ دیکھنے کو ملا۔ مندروں کی ترقی اور پجاریوں کی تنخواہوں کے سلسلہ میں بجٹ میں خاطر خواہ رقم مختص کی گئی لیکن مساجد کے سلسلہ میں اس طرح کی فراخدلی نہیں دکھائی گئی۔ وزیر فینانس ای راجندر کی بجٹ تقریر میں مندروں کی ترقی اور ملازمین کی بھلائی کے عنوان سے ایک علحدہ چیاپٹر رکھا گیا جس میں تین پیراگراف ہیں۔ بجٹ تقریر میں کہا گیا ہے کہ یاگیری گٹہ ٹیمپل ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کی جانب سے مندر کی تعمیر نو اور اطراف کے علاقہ کی ترقی سے متعلق اقدامات جاریہ سال مکمل کرلئے جائیں گے۔ حکومت نے ان کاموں کیلئے 250 کروڑ روپئے کی تجویز رکھی ہے۔ اسی طرح ویملواڑہ ٹمپل ایریہ ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کیلئے 100 کروڑ کا تخمینہ رکھا گیا۔ بھدرا چلم ، باسر اور دھرما پوری کی مندروں کی ترقی کیلئے علی الترتیب 100 کروڑ، 50 کروڑ اور 50 کروڑ مختص کئے گئے ۔

TOPPOPULARRECENT