Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / منشیات اسکام سافٹ ویر کمپنیاں اگلا نشانہ

منشیات اسکام سافٹ ویر کمپنیاں اگلا نشانہ

حیدرآباد۔/26جولائی، ( سیاست نیوز) منشیات کیس میں ایک اور سنسنی خیز انکشاف ہوا ہے، سافٹ ویر کمپنیوں کے کیفٹریا ڈرگس سنٹرس میں تبدیل ہورہے ہیں۔ سافٹ ویر کمپنیوں میں کام کرنے والے ملازمین جو منشیات کے غلام ہیں اس کی ایک رپورٹ تیار کرتے ہوئے محکمہ اکسائیز کے عہدیداروں نے محکمہ آئی ٹی کے سکریٹری جیش رنجن کے حوالے کردی ہے۔ باوثوق ذرائع سے پتہ چلا ہے کہ سافٹ ویر کمپنیوں میں خدمات انجام دینے والے 20 تا30 فیصد ایمپلائیز منشیات لینے کے عادی بن گئے ہیں۔ منشیات کے ملزمین کیلوین، قدوس، نکھیل شیٹی، ولیمپس اور ذیشان کو تحویل میں لے کر تحقیقات کرنے والی ایس آئی ٹی کو سافٹ ویر کمپنیوں میں منشیات سربراہ ہونے کے پختہ ثبوت ملے ہیں۔ ان ملزمین کے اقبالی بیان پر سافٹ ویر کمپنیوں کی فہرست تیار کرتے ہوئے اکسائیز انفورسمنٹ کے ڈائرکٹر اکون سبھروال نے محکمہ آئی ٹی کے سکریٹری جیش رنجن کو روانہ کی ہے اور انہیں سافٹ ویر کمپنیوں کے انتظامیہ سے تبادلہ خیال کرنے کا مشورہ دیا ہے۔ جیش رنجن نے سافٹ ویر کمپنیوں میں منشیات کی تقسیم کی رپورٹ وصول ہونے کا اعتراف کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ منشیات کے عادی ملازمین کے نام نہیں ملے ہیں صرف سافٹ ویر کمپنیوں کے نام ملے ہیں، 20 تا30 فیصد ایمپلائز کے ڈرگس استعمال کرنے پر ساری سافٹ ویر کمپنیوں کو شک کی نظر سے نہیں دیکھا جانا چاہیئے۔
جیش رنجن نے بتایا کہ اکسائیز عہدیداروں نے جو فہرست دی ہے وہ خود ان سافٹ ویر کمپنیوں کے انتظامیہ اور منشیات کے غلام ملازمین سے راست بات چیت کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT