Wednesday , June 20 2018
Home / اضلاع کی خبریں / منڈل پریشد گمبھی راؤپیٹ کا سہ ماہی اجلاس

منڈل پریشد گمبھی راؤپیٹ کا سہ ماہی اجلاس

گمبھی راؤ پیٹ ۔ 20 ۔ نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) منڈل پریشد گمبھی راؤ پیٹ کا سہ ماہی اجلاس 19 نومبر کو دوپہر تین بجے شروع ہوا جو زبردست شور شرابہ کے بعد شام آٹھ بجے اختتام کو پہنچا ۔ چیرپرسن منڈل پریشد کمری سایوا کی زیرصدارت منعقدہ اس اجلاس میں زیڈ پی ٹی سی رکن ملوگاری پدما کے علاوہ 13 یم پی ٹی سی ارکان 15 سرپنچ سمیت مختلف محکمہ جات کے اعلی

گمبھی راؤ پیٹ ۔ 20 ۔ نومبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) منڈل پریشد گمبھی راؤ پیٹ کا سہ ماہی اجلاس 19 نومبر کو دوپہر تین بجے شروع ہوا جو زبردست شور شرابہ کے بعد شام آٹھ بجے اختتام کو پہنچا ۔ چیرپرسن منڈل پریشد کمری سایوا کی زیرصدارت منعقدہ اس اجلاس میں زیڈ پی ٹی سی رکن ملوگاری پدما کے علاوہ 13 یم پی ٹی سی ارکان 15 سرپنچ سمیت مختلف محکمہ جات کے اعلی عہدیدار بھی موجود تھے ۔ اجلاس کے آغاز کے ساتھ ہی کانگریس و بھارتیہ جنتا پارٹی کے یم پی ٹی سی ارکان جن میںمحمد حمید الدین خالد ، لکشمن ، کرشنا نے آسرا اسکیم کے تحت وظائف کی فہرست کو جاری کرتے ہوئے مستحق افراد میں وظیفہ کو ادا کرنے کی مانگ کرتے ہوئے ہاتھ میں پوسٹر لئے زبردست احتجاج کیا ۔ اس بناء ٹی آر ایس کے دیگر یم پی ٹی سی رکن جن میں کملا کر ریڈی وغیرہ شامل ہیں مداخلت کی جس کی وجہ کانگریس و ٹی آر ایس کے یم پی ٹی سی ارکان پر زبردست لفظی جھڑپ دیکھی گئی اور اجلاس کی کارروائی کو کچھ دیر کیلئے روکنا پڑا ۔ دوبارہ جیسے ہی اجلاس کی کارروائی کا آغاز ہوا دوبارہ انہیں یم پی ٹی سی ارکان کے درمیان دیگر مسائل کو لیکر نوک جھونک ہوئی ۔ اجلاس کی کارروائی میں بار بار شور و غل کے پیش نظر وہاں موجود خواتین نے تین چار دفعہ اجلاس کا واک آوٹ کرتے ہوئے اجلاس سے باہر چلے گئے اور کہا کہ آپس میں بحث و تکرار کی وجہ دیرانہ حل طلب مسائل کی یکسوئی ناممکن ہے ۔ واک آوٹ کردہ خواتین کو سرپنچ فورم صدر جان ملیشم کی جانب سے منت و سماجت کرتے ہوئے دوبارہ اجلاس کی کارروائی شروع کی گئی ۔ اس موقع پر سرپنچ شری گدالے موضع میں موجود اپرپرائمری اسکول میں 80 طلباء کو صرف ایک ٹیچر رہنے پر ہورہی مشکلات کا ذکر کرتے ہوئے اساتذہ کی مخلوعہ جائیدادوں کو پُر کرنے کا مطالبہ کیا ۔ یم پی ٹی سی رکن حمید الدین خالد نے بھی ہاوسنگ اسکیم کے تحت مکانات کی تعمیر پر تقریباً 27 لاکھ روپئے بلوں کی عدم منظوری پر اظہار تعجب کیا اور ہاوسنگ AE سے اپیل کی کہ وہ جلد از جلد ہاوسنگ کے بقیہ جات کو فوراً جاری کریں۔ سرپنچ صمدرالنگاپور سروسوتی نے کھتوں کے نقصان کے معاوضہ کی ادائی میں تیار کردہ فہرست میں بدعنوانیوں کی شکایت کی اور کہا کہ تیار کردہ فہرست میں بدعنوانیوں کی وجہ حقیقی مستحق کاشتکاروں کو معاوضہ نہ مل سکا ۔ کوآپشن رکن محمد محبوب علی ، یم پی ٹی سی ارکان کملا کر ریڈی ، حمید الدین خالد نے مقامی کلسٹر ہاسپٹل کی زبوں حالی کا ذکر کیا اور شکایت کی کہ اکثر اوقات دواخانے سے ڈاکٹر غائب رہتے ہیں جس کی وجہ سطح غربت متاثر افراد کو علاج کیلئے بطور قرض رقم حاصل کرتے ہوئے خانگی دواحانوں کا رخ کرنا پڑرہا ہے ۔ ان ارکان نے دواخانے میں موجود ڈاکٹروں کا ڈپٹیشن منسوخ کرنے کیلئے اجلاس میں قرارداد کی منظوری کا مطالبہ کیا ۔ اس اجلاس میں ڈپٹی تحصیلدار بھوشنم ، یم پی ڈی او سرینواس ریڈی ، آبپاشی اے ای محمد معراج الدین ، یم ای او ٹی پرشوتھم ، ای او پی آر ڈی بالراج ، میڈیکل آفیسر اسپورتی وغیرہ موجود تھے ۔

TOPPOPULARRECENT