Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / موجودہ حکومت ‘ کانگریس دور کے پراجیکٹس کا افتتاح میں مصروف

موجودہ حکومت ‘ کانگریس دور کے پراجیکٹس کا افتتاح میں مصروف

سابقہ ڈیزائین کی تبدیلی سے رقومات کا زیاں ۔ ورکنگ صدر تلنگانہ کانگریس ایم وکرامارکا
حیدرآباد 22 جولائی ( این ایس ایس ) تلنگانہ پردیش کانگریس کے ورکنگ صدر ملو بٹی وکرامارکار نے الزام عائد کیا کہ ٹی ار ایس قائدین ان پراجیکٹس کا افتتاح انجام دے رہے ہیں جن کی تکمیل سابقہ کانگریس حکومت نے کی تھی ۔ ان پراجیکٹس کا دوبارہ افتتاح کرتے ہوئے جل یگنم پروگرام کے فائدے حاصل کرنے پر توجہ دی جا رہی ہے ۔ گاندھی بھون میں سابق وزیر سدرشن ریڈی اور دوسرے قائدین کے مہیش ‘ اشون ریڈی اور دوسروں کے ساتھ میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے الزام عائد کیا کہ وزیر آبپاشی ٹی ہریش راؤ نے پالمور کا دورہ پراجیکٹس کے افتتاح کے نام پر کیا جبکہ وہ جل یگنم پروگرام کے نتائج دیکھنا چاہتے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ کلواکرتی ‘ بھیما ‘ نٹیم پاڈو ‘ کوئل ساگر پراجیکٹس ( محبوب نگر ) کو کانگریس دور حکومت میں 95 فیصد تک مکمل کرلیا گیا تھا تاہم اب وزیر آبپاشی ان کے افتتاح کرتے پھر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہریش راؤ کی جانب سے ان پراجیکٹس کا دوبارہ افتتاح کرنا مضحکہ خیز ہے ۔ ان پراجیکٹس کا کانگریس دور حکومت میں پہلے ہی افتتاح ہوچکا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ ملک کی تاریخ میں پہلی مرتبہ ہو رہا ہے اور ہریش راؤ کی طرح کسی نے نہیں کیا تھا ۔ انہوں نے حکومت سے کہا کہ وہ دومے گڈم پراجیکٹ کو مکمل کرے ۔ اس پراجیکٹ کا بھی تقریبا کام کانگریس دور حکومت میں مکمل ہوگیا تھا اور اس کیلئے 200 کروڑ روپئے مختص کئے گئے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر دومے گڈم پراجیکٹ کو مکمل کیا جاتا ہے تو دو لاکھ ایکر اراضیات کو فوری سیراب کیا جاسکے گا ۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت نے اس پراجیکٹ کا ڈیزائین 10,000 کروڑ روپئے کے صرفہ سے تبدیل کردیا ہے جس کے نتیجہ میں سابق میں خرچ کی گئی رقومات ضائع ہو رہی ہیں ۔ اس سے کھمم ضلع کو نقصان ہو رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر ریاستی حکومت اس پراجیکٹ کو گوداوری کے مقام پر ترک کردیتی ہے تو ریاست کو شبھاری دریا کے پانی پر حق سے مستقل محروم ہوجانا پڑے گا ۔ ٹی آر ایس حکومت صرف کنٹراکٹرس کی فلاح و بہبود پر توجہ دے رہی ہے اور عوام کی فلاح و بہبود کو نظر انداز کیا جا رہا ہے ۔ سابق وزیر آبپاشی سدرشن ریڈی نے بتایا کہ سابقہ کانگریس حکومت نے آبپاشی کیلئے کئی پراجیکٹس جل یگنم کے تحت شروع کئے تھے اور ان کا بیشتر کام مکمل ہوچکا تھا موجودہ حکومت صرف ان پراجیکٹس کا ڈیزائین تبدیل کرنے میں مصروف ہے اور کسانوں کو نقصان پہونچا رہی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT