Sunday , November 19 2017
Home / Top Stories / مودی حکومت اقتدار کے لالچ میں منتخبہ حکومتوں کو بیدخل کر رہی ہے

مودی حکومت اقتدار کے لالچ میں منتخبہ حکومتوں کو بیدخل کر رہی ہے

سپریم کورٹ کے فیصلے سے دستور اور جمہوریت کا تحفظ ہوا ۔ صدر کانگریس سونیا گاندھی کا ناندیڑ میں خطاب
ناندیڑ ( مہاراشٹرا ) 14 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) مودی حکومت پر تنقیدوں کو تیز کرتے ہوئے کانگریس کی صدر سونیا گاندھی نے آج حکومت پر الزام عائد کیا کہ وہ اقتدار کیلئے اپنی لالچ اور ہوس کی وجہ سے عوامی رائے کا احترام نہیں کر رہی ہے ۔ سپریم کورٹ کی جانب سے ارونا چل پردیش میں کانگریس حکومت کو کل بحال کئے جانے کے تناظر میں سونیا گاندھی نے الزام عائد کیا کہ مودی حکومت نے ان ریاستوں میں عوام کی جانب سے منتخبہ حکومتوں کو بیدخل کیا ہے اور اس نے رائے عامہ کی توہین کی ہے  ۔ سونیا گاندھی نے یہاں کانگریس کی جانب سے منعقدہ ایک ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ موجودہ مرکزی حکومت نے اقتدار کیلئے اپنے لالچ اور ہوس کی وجہ سے اروناچل پردیش اور اترکھنڈ کی عوامی منتخبہ حکومتوں کو بیدخل کردیا تھا یہ عوام کی رائے کی توہین ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں اپنی سپریم کورٹ پر فخر ہے کہ اس نے دستور اور جمہوریت کا تحفظ کیا ہے ۔

سونیا گاندھی نے یہاں سینئر کانگریس لیڈر و سابق مرکزی وزیر شنکر راؤ چاوان کے مجسمہ کی نقاب کشائی اور ایک یادگار لائبریری کا افتتاح بھی انجام دیا ۔ سابق وزیر اعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ بھی اس موقع پر موجود تھے ۔ سونیا گاندھی نے کہا کہ مودی حکومت نے اروناچل پردیش اور اترکھنڈ میں عوامی منتخبہ حکومتوں کو بیدخل کرتے ہوئے رائے عامہ کی توہین کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر آج شنکر راؤ چاوان زندہ ہوتے وہ موجودہ حالات کو دیکھ کر وہ بہت افسردہ ہوتے ۔ موجودہ حکومت سابقہ یو پی اے حکومت کی شروع کردہ فلاح و بہبود کی اسکیمات میں تبدیلیاں کرتے ہوئے عوام کو راحت پہونچانے سے گریز کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ افسوس کی بات یہ ہے کہ ہماری منموہن سنگھ حکومت کی جانب سے کسانوں ‘ قبائلی عوام ‘ اقلیتوں اور خواتین کیلئے شروع کردہ اسکیمات کو کمزور کیا جا رہا ہے ۔ اس کے نتیجہ میں لاکھوں خاندانوں کو مسائل کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ مودی حکومت کو یہ یاد دہانی کروانے کی ضرورت ہے کہ ملک میں قحط سالی ہے ۔ مودی حکومت کی پالیسیوں کے نتیجہ میں ملک میں کسان یکا و تنہا ہوگئے ہیں۔ سونیا گاندھی نے حکومت سے کہا کہ اس نے صنعتکاروں کے ہزاروں کروڑ روپئے کے قرضہ جات معاف کردئے ہیں لیکن کسانوں کو ان کے حال پر چھوڑ دیا گیا ہے ۔ بی جے پی حکومت گذشتہ 60 سالوں میں ملک کے کسانوں کیلئے شروع کردہ اسکیمات کو کمزور کر رہی ہے ۔ کانگریس کسانوں کی آواز کو دبائے جانے کی اجازت ہرگز نہیں دے گی۔ سونیا گاندھی نے چاوان کی خدمات کی ستائش بھی کی ۔

TOPPOPULARRECENT