Saturday , December 15 2018

مودی حکومت میں اقلیتیںاور ایس سی ایس ٹی حقوق بالکل محفوظ

رامپور میں ترقیاتی پراجکٹس کی افتتاحی تقریب سے مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور کا خطاب
رامپور ۔ 16 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) پسماندہ طبقات، درج فہرست ذاتوں اور درج فہرست قبائل اور اقلیتیں مودی حکومت کے دوران بالکل محفوظ ہیں۔ مرکزی وزیر مختارعباس نقوی نے آج یہ تبصرہ کیا۔ مرکزی وزیر برائے اقلیتی امور نے کہا کہ جو لوگ خلوص کے ساتھ قوم کی ترقی اور جو لوگ سامراجی ذہنیت رکھتے ہیں، ان کے درمیان جنگ جاری ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایسی ذہنیت کو مودی حکومت نے شکست دی ہے۔ پسماندہ طبقات، ایس سی اور ایس ٹی کے علاوہ اقلیتوں اور دیگر کمزور طبقات کے حقوق مودی حکومت کے دور میں بالکل محفوظ ہیں۔ مختار عباس نقوی کا یہ بیان ان کے دفتر سے جاری کیا گیا ہے۔ اپوزیشن پارٹیوں پر تنقید کرتے ہوئے مرکزی وزیر نے کہا کہ بعض اقتدار سے بیدخل افراد آدھی رات کی سیاسی سازشوں کے ذریعہ جو انہیں ورثے میں ملی ہیں، ترقیاتی ایجنڈہ کے خلاف ہیں۔ نقوی نے کہا کہ حکومت ایسے افراد کو کامیاب ہونے کی اجازت نہیں دے گی۔ وہ آدھی رات کی سیاسی سازشوں کی وضاحت کرنے سے قاصر رہے لیکن ان کا یہ تبصرہ صدر کانگریس سونیا گاندھی کے ایک تبصرہ کے چند دن بعد منظرعام پر آیا ہے جبکہ انہوں نے کٹھوا اور اناؤ عصمت ریزی واقعات کے خلاف قومی دارالحکومت میں احتجاج کرتے ہوئے آدھی رات کے ایک جلوس کی قیادت کی۔ مختارعباس نقوی نے یہ تبصرہ کئی ترقیاتی کاموں کی رامپور ضلع پنچایت میں افتتاح انجام دیتے ہوئے کیا۔ مرکزی وزیر کے یہ تبصرے دلت تنظیموں کے جاریہ ماہ کے اوائل میں سپریم کورٹ کے فیصلہ کے خلاف احتجاجی مظاہروں کے پس منظر میں اہمیت رکھتے ہیں۔ دلت تنظیموں کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ کے اس فیصلہ سے ایس سی ؍ ایس ٹی قانون کی دفعات میں نرمی پیدا ہوتی ہے۔ نقوی نے دعویٰ کیا کہ حکومت نے ریکارڈ کام کیا ہے۔ سماجی ۔ معاشی ۔ تعلیمی ترقی کیلئے سماج کے پسماندہ طبقات کیلئے گذشتہ چار سال کے دوران جدوجہد کی ہے۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ ایس سی ؍ ایس ٹی اور اقلیتوں کے حقوق جن کی طمانیت دستورہند میں دی گئی ہے، انہیں کسی بھی طریقہ سے کمزور کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے دستوری صیانت اور پسماندہ طبقات کو بااختیاری فراہم کرنے کیلئے اقدامات کئے ہیں۔ انہوں نے کانگریس اور اس کی حلیف پارٹیوں پر الزام عائد کیا کہ وہ سامراجی ذہنیت کے ساتھ کام کررہی ہیں اور جب وزیراعظم مخلصانہ انداز میں سب کو ساتھ لے کر ترقی دینے کی جدوجہد کررہے ہیں، حکومت کسی بھی قسم کی خلل اندازی، انتشار، غیرجمہوری انداز اور مخالف ترقی سیاست کو سب کو ساتھ لے کر ترقی کرنے کے ایجنڈہ پر غالب آنے کی اجازت نہیں دے گی۔ مختارعباس نقوی نے اپوزیشن پارٹیوں پر الزام عائد کیا کہ وہ قوم کی ہمہ جہتی ترقی ہضم نہیں کر پا رہے ہیں۔ کسی بھی شخص یا پارٹی کا نام لئے بغیر انہوں نے کہا کہ بعض مفادات حاصلہ ملک میں پھوٹ پیدا کرنے کیلئے جو مذہب، ذات پات، علاقہ اور زبان کے نام پر کی جائے گی، گھناؤنے عزائم رکھتے ہیں۔ نقوی نے دعویٰ کیا کہ اعتماد اور ترقی کا ماحول مودی نے تخلیق کیا ہے۔ سماج کے تمام طبقوں میں یہ ماحول پیدا ہوچکا ہے لیکن اس میں خلل اندازی کیلئے بعض عناصر ’’سازش‘‘ میں مصروف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم پختہ ارادہ کے مالک انسان ہیں اور ہر ایک کو ساتھ لیکر ترقی کرنا چاہتے ہیں لیکن اپنے منفی عمل اور سازش کے ذریعہ ترقی کے اس ایجنڈہ کے خلاف بعض عناصر کام کررہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT