Saturday , November 18 2017
Home / Top Stories / مودی حکومت نے ایک وعدہ بھی پورا نہیں کیا : شرد یادو

مودی حکومت نے ایک وعدہ بھی پورا نہیں کیا : شرد یادو

ہر سال دو کروڑ نوجوانوں کو روزگار ، ہر شہری کے کھاتے میں 15 لاکھ کا کیا ہوا؟

نئی دہلی 20مئی (سیاست ڈاٹ کام ) جنتا دل (یو ) کے سینئر لیڈر اور رکن پارلیمنٹ شرد یادو نے مودی حکومت پر تین سال کے اقتدار کے دوران ایک بھی وعدہ پورا کرنے میں ناکام رہنے کا الزام لگاتے ہوئے آج کہا کہ وہ عوام کی توجہ اصل مسائل سے ہٹانے کے لئے غیر ضروری معاملات اٹھاتی رہتی ہے ۔مرکزی حکومت کے تین سال کی حصولیابیوں پر ردعمل کرتے ہوئے شرد یادو نے نیوز ایجنسی ’یو این آئی‘ سے کہا کہ بی جے پی نے اپنے انتخابی منشور میں 42بڑے وعدے کئے تھے جن میں ہر سال دو کروڑ نوجوانوں کو روزگار دینا ، کسانوں کو فصل لاگت کا ڈیڑھ گنا اقل ترین امدادی قیمت دینا ، ملک اور بیرون ملک میں جمع کالا دھن واپس لاکر ہر خاندان کے کھاتے میں پندرہ سے بیس لاکھ روپے جمع کرنا ، گنگا کو آلودگی سے پاک کرنا اور ’سب کا ساتھ سب کا وکاس‘ کی بات شامل تھی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کے وعدے کے مطابق اب تک چھ کروڑ نوجوانوں کو روزگار مل جانا چاہئے تھا لیکن بے روزگاروں کی تعداد بڑھ رہی ہے ۔ سال 2014-15ء کے دوران 1.35 لاکھ نوجوانوں کو ہی روزگار ملا ۔ حال ہی میں انفارمیشن ٹکنالوجی کی کمپنیوں نے ملازمین کی تخفیف کردی ۔ کسانوں کو اپنی فصلیں اقل ترین امدادیقیمت سے بھی کم پر فروخت کرنا پڑ ا ہے ۔ گذشتہ تین سال کے دوران کسانوں کی خودکشی کے واقعات تیزی سے بڑھے ہیں بالخصوص ٹاملناڈو میں۔ ملک بھر میں سال 2014کے مقابلے میں 2015میں کسانوں کی خودکشی کے واقعات میں 41فیصد اضافہ ہوا ہے ۔ شرد یادو نے کہا کہ کسانوں نے گذشتہ سال کے مقابلے میں گیہوں اور دالوں کی زیادہ پیداوار کی ہے ۔ دالوں کی پیداوار میں 33فیصد کا اضافہ ہوا ہے لیکن حکومت دالوں کی  نجی تجارت کو فروغ دینے میں مصروف ہے اور اس پر کسٹم ڈیوٹی بھی عائد نہیں کررہی ہے جس سے کسانوں میں بے چینی ہے ۔ حکومت نے حال ہی میں گیہوں پر دس فیصد کسٹم ڈیوٹی لگائی ہے جسے کم سے کم 25فیصد کرنے کی ضرورت تھی۔ کالے دھن کے سلسلے میں انہوں نے کہاکہ یہ مسئلہ مسلسل بڑھ رہا ہے ۔ انہوں نے تعلیم اور صحت کے شعبہ میں بجٹ میں تخفیف کئے جانے پر بھی تشویش کااظہار کیا۔

TOPPOPULARRECENT