Tuesday , April 24 2018
Home / سیاسیات / مودی حکومت پر پارلیمانی سرمائی سیشن کو سبوتاج کرنے کاالزام

مودی حکومت پر پارلیمانی سرمائی سیشن کو سبوتاج کرنے کاالزام

نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کی مذمت ، سی ڈبلیو سی سے سونیا گاندھی کا خطاب
نئی دہلی ۔20 نومبر ۔( سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کی صدر سونیا گاندھی نے آج حکومت کو ہر محاذ سے سخت تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے الزام عائد کیا کہ وہ فرضی بنیادوں پر پارلیمنٹ کے سرمائی سیشن کو سبوتاج کررہی ہے۔ سونیا گاندھی نے کانگریس ورکنگ کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے جی ایس ٹی کو نقائص اور خامیوں سے بھرپور ٹیکس نظام قرار دیا اور حکومت پر الزام عائد کیا کہ اُس نے جی ایس ٹی پر عمل آوری کے لئے موثر تیاری نہیں کی تھی۔ انھوں نے نوٹ بندی کے مسئلہ پر بھی مودی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ اس اقدام کے سبب لاکھوں عوام متاثر ہوئے ہیں۔ سونیا گاندھی نے اپنی پارٹی کے اعلیٰ ترین پالیسی ساز ادارہ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’مودی حکومت اپنی ہٹ دھرمی کے سبب پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس کو فرضی بنیادوں پر سبوتاج کرتے ہوئے پارلیمانی جمہوریت پر ایک تاریک سایہ ڈال رہی ہے ‘‘ ۔ پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس روایتی طورپر نومبر کے تیسرے ہفتہ سے شروع ہوتا ہے اور ڈسمبر کے تیسرے ہفتہ تک جاری رہتا ہے ۔ ذرائع کے مطابق حکومت اب سرمائی اجلاس کو محدود کرنے پر غور کررہی ہے۔ سمجھا جاتا ہیکہ یہ سیشن ڈسمبر کے دوسرے ہفتہ میں شروع ہونے کے بعد 10د ن تک جاری رہے گا ۔ کانگریس کی صدر نے حکومت پر یہ الزام بھی عائد کیا کہ وہ سابق وزرائے اعظم پنڈت جواہر لعل نہرو اور اندراگاندھی کی خدمات اور کارناموں کو حذف کرتے ہوئے جدید ہندوستان کی تاریخ بدلنے کی کوشش کررہی ہے ۔

 

TOPPOPULARRECENT