Friday , December 15 2017
Home / Top Stories / مودی حکومت کا زوال شروع :یچوری

مودی حکومت کا زوال شروع :یچوری

جے این یو میں اے بی وی پی کی شکست ، اس کا ثبوت

کولکتہ ۔ 20 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) سی پی آئی ایم جنرل سکریٹری سیتارام یچوری نے آج الزام عائد کیا کہ نوٹ بندی اور جی ایس ٹی کی تکلیف دہ عمل آوری میں ہندوستانی معیشت کی کمر توڑ دی ہے اور اس کیلئے نریندر مودی حکومت ذمہ دار ہے۔ معاشی انحطاط کے ساتھ ہی مودی حکومت کا زوال شروع ہوچکا ہے۔ جواہر لال نہرو یونیورسٹی اور دہلی یونیورسٹی میں حالیہ اسٹوڈنٹ یونین انتخابات میں آر ایس ایس کی طلبہ تنظیم اے بی وی پی کی شکست اس کا ثبوت مانا جاسکتا ہے۔ بائیں بازو لیڈر نے اے بی وی پی کی اس شکست کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ مرکز میں مودی حکومت کے زوال کا پہلے ہی آغاز ہوچکا ہے۔ ملک کی معیشت کو تباہ کرنے کیلئے مودی حکومت ہی ذمہ دار ہے۔ اس حکومت نے سب سے پہلے نوٹ بندی کا فیصلہ کیا اس کے بعد عوام پر تکلیف دہ جی ایس ٹی کو مسلط کیا۔ جی ایس ٹی نے ملک کی معیشت کی کمر توڑ دی ہے۔ کسان خودکشی کررہے ہیں، ان پر قرضوں کا بوجھ ڈال دیا گیا ہے۔ حکومت قطعی نظرانداز کررہی ہے۔ حکومت نے کوئی قدم نہیں اٹھایا اور نہ ہی کسانوں کو راحت بخشی بلکہ حکومت نے کارپوریٹ گھرانوں کو بھاری قرضے دیئے ہیں۔ یچوری نے الزام عائد کیا کہ بی جے پی اور اس کے وزراء قوم کو گمراہ کررہے ہیں اور یہ کہہ رہے ہیں کہ معیشت کی تباہی کی تکنیکی وجوہات ہیں۔ جے این یو میں بائیں بازو طلبہ تنظیم کی کامیابی اور این ایس یو آئی کانگریس اسٹوڈنٹ ونگ نے اے بی وی پی کو شکست دی ہے۔ اس سے ظاہر ہوتا ہیکہ ملک کی فضاء تبدیل ہورہی ہے اور لوگ مودی حکومت سے بیزار ہوچکے ہیں۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ بی جے پی کی فرقہ پرستی ملک کے سیکولر کردار کیلئے بہت بڑا دھکہ ہے۔ ان کا دعویٰ ہیکہ سابق کانگریس حکومتوں کی پالیسیوں کی وجہ سے ہی بی جے پی اقتدار میں آنے کی قابل نہیں ہے۔ کولکتہ میں درگا مورتیوں کے وسرجن پر عائد پابندیوں کے تنازعہ کے بارے میں یچوری نے کہا کہ ریاستی حکومت نے جو فیصلے کئے ہیں وہ بھی فرقہ پرستی کا مظہر ہیں۔ مغربی بنگال میں ٹی ایم سی اور بی جے پی فرقہ پرستی کا کارڈ کھیل رہی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT