Sunday , December 17 2017
Home / Top Stories / مودی نے نوٹ بندی سے 99 فیصد دیانتدار عوام کا مذاق اڑایا

مودی نے نوٹ بندی سے 99 فیصد دیانتدار عوام کا مذاق اڑایا

وزیراعظم دولتمند دوستوں کے طیاروں میں امریکہ اور چین کا سفر کرتے ہیں: راہول
جونپور۔19 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کے نائب صدر راہول گاندھی نے وزیراعظم پر راست تنقیدی حملہ کرتے ہوئے آج الزام عائد کیا کہ نریندر مودی اپنے دولتمند دوستوں کے طیارے استعمال کرتے ہوئے امریکہ اور چین کا سفر کرتے ہیں اور نوٹوں کی منسوخی کے ذریعہ انہوں نے 99 فیصد دیانتدار افراد کا مذاق اڑا رہے ہیں۔ راہول نے اترپردیش کے جونپور میں جن آکروش ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’’دولت کا سب سے بڑا حصہ محض ایسے 50 خاندانوں کے پاس ہے جن کے ارکان خاندان کے ساتھ مودی امریکہ اور چین کے دورے کرتے ہیں اور ان کے طیارے استعمال کیا کرتے ہیں۔‘‘ نوٹوں کی منسوخی کے مسئلہ پر ہنگامہ آرائی کی نذر ہونے والے پارلیمنٹ کے سہ مائی سیشن کے اختتام کے بعد اترپردیش میں یہ پہلی بڑی ریالی تھی۔ راہول نے گزشتہ ہفتہ مودی کی شخصی رشوت ستانی کو بے نقاب کرنے کی دھمکی دی تھی اور دعوی کیا تھا کہ انہیں (راہول کو) پارلیمنٹ میں محض اس لئے بات کرنے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے کہ ان کے انکشافات سے سیاسی زلزلہ آسکتا تھا۔ کانگریس کے لیڈر نے اصرار کے ساتھ کہا کہ ’’ساری نقد رقم کالا دھن نہیں ہوتی اور سارا کالا دھن صرف نقد رقم ہی نہیں ہوتا‘‘ انہوں نے کہا کہ ’’94 فیصد کالا دھن بیرونی بینکوں میں رکھا ہوا ہے اس کا رئیل اسٹیٹ اور اراضی کی معاملتوں کے علاوہ سونے کی ذخیرہ اندوزی میں استعمال ہوتا ہے۔ لیکن کیا وجہ ہے کہ وزیر اعظم محض 6 فیصد نقدی کے پیچھے پڑے ہیں۔ ‘‘ راہول نے کہا کہ ملک کی 60 فیصد دولت صرف ایک فیصد افراد کے پاس ہے اور مودی نے نوٹوں کی منسوخی کے ذریعہ 99 فیصد دیانتدار عوام کا مذاق اڑا یا ہے۔‘‘ راہول گاندھی نے الزام عائد کیا کہ مودی نے وجئے مالیا کا 1200 کروڑ روپئے کا قرض معاف کیا۔ 50 دولتمند خاندانوں کی طرف سے لئے گئے 1.10 لاکھ کروڑ روپئے کے قرض معاف کئے گئے ہیں۔ انہوں (مودی) نے غریب کسانوں کے قرضوں کو معاف کرنا گوارہ نہیں سمجھا ۔ راہول گاندھی جنہوں نے کسانوں کے ابتر حالات کو اجاگر کرنے کے لئے دیوریا تا دہلی پدیاترا شروع کی تھی کہا کہ کسانوں کے قرضوں کی معافی کے لئے انہوں نے وزیراعظم سے ملاقات کی تھی لیکن انہوں نے اس پر سنجیدگی کا مظاہرہ نہیں کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ نوٹوں پر امتناع کا مقصد ’’غریب کا کھینچو اور امیر کو سینجو‘‘ ہے۔ یہاں یہ بات بھی دلچسپ رہی کہ اس ریالی میں چند ورکرس نے مودی کے خلاف نعرہ بازی شروع کی لیکن راہول نے انہیں شخصی حملوں سے باز رہنے کا مشورہ دیا۔ کانگریس لیڈر نے کہا کہ ’’نریندر مودی کے خلاف ہماری لڑائی سیاسی ہے۔ برائے مہربانی آپ ان (مودی) کے خلاف مردہ باد کا نعرہ نہ لگائیں۔ ایسے نعرے کانگریس نہیں لگاتی بلکہ فاشسٹ اور آر ایس ایس جیسی تنظیمیں لگاتی ہیں۔

TOPPOPULARRECENT