Sunday , February 25 2018
Home / Top Stories / مودی کا پسندیدہ ’’میک ان انڈیا‘‘ پراجکٹ فوت!

مودی کا پسندیدہ ’’میک ان انڈیا‘‘ پراجکٹ فوت!

گجرات میں نانو کار پلانٹ میں پیداوار ٹھپ ، راہول گاندھی کی تنقید
نئی دہلی ۔ /26 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کے نائب صدر راہول گاندھی نے آج میڈیا رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ گجرات پلانٹ میں ’’نانو‘‘ کاروں کی پیداوار میں گراوٹ درج کی گئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم نریندر مودی کا پسندیدہ ’’میک ان انڈیا ‘‘ پراجکٹ فوت ہوچکا ہے ۔ اس کے بعد گجرات کے ٹیکس دہندگان کی رقم 33,000 کروڑ روپئے بھی ’’راکھ‘‘ میں تبدیل ہوگئی ہے۔ راہول گاندھی نے یہ بھی سوال کیا کہ آخر اتنی بڑی رقم کے ’’خاک‘‘ ہونے کے لئے کون ذمہ دار ہے ۔ کانگریس کے نائب صدر یہ کہنا چاہتے تھے کہ حکومت گجرات نے سدانند میں اس کار پراجکٹ کے لئے 33000 کروڑ روپئے کے منافع کو تباہ کردیا ہے ۔ وزیراعظم کا پسندیدہ پراجکٹ ’’میک ان انڈیا‘‘ پراجکٹ فوت ہوچکا ہے اور گجرات کے عوام کا ٹیکس کی شکل میں ادا کردہ پیسہ ضائع ہوچکا ہے ۔ آخر اس تباہی کے لئے کون ذمہ دار ہے ۔ راہول گاندھی نے ٹوئیٹر پر یہ سوال پوسٹ کرکے کہا کہ مودی حکومت نے گجرات کے عوام کو فوائد سے محروم کردیا ہے ۔ نائب صدر کانگریس اس وقت انتخابی ریاست گجرات میں طوفانی مہم چلارہے ہیں جہاں گزشتہ 22 سال سے بی جے پی کی حکومت ہے ۔ میڈیا رپورٹ میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ ٹاٹا موٹر کے سانند پلانٹ سے نانو کاروں کی پیداوار گھٹ کر صرف دو کاریں تیار کئے جارہے ہیں ۔

TOPPOPULARRECENT