Friday , November 24 2017
Home / سیاسیات / مودی کیخلاف کانگریس کی الیکشن کمیشن سے شکایت

مودی کیخلاف کانگریس کی الیکشن کمیشن سے شکایت

نئی دہلی۔20 فبروری ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) کانگریس نے آج یہ الزام لگاتے ہوئے کہ وزیر اعظم نریندر مودی اسمبلی انتخابات کے دوران معاشرے میں صف بندی کی کوشش کر رہے ہیں، الیکشن کمیشن سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس کا نوٹس لے اور معاملے کی جانچ کرے ۔ کانگریس کے ترجمان آنند شرما نے یہاں پارٹی ہیڈکوارٹر میں ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ یہ پہلی بار ہے کہ وزیر اعظم ریاستوں کا الیکشن لڑ رہے ہیں۔ انھوں نے وزیر اعظم کے قبرستان اور شمشان والے بیان کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ انتخابات میں خوشحالی اور ترقی کی بات ہونی چاہئے لیکن وہ معاشرے میں تقسیم کی بات کر رہے ہیں۔ کانگریس لیڈر نے الزام لگایا کہ اسمبلی انتخابات میں بھارتیہ جنتا پارٹی کو اپنی ہار صاف نظر آرہی ہے جس کی وجہ سے مسٹر مودی بوکھلا گئے ہیں اور وہ معاشرے میں صفبندی کرنے لگے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن کو اس معاملے میں کارروائی کرنی چاہیے کیونکہ آزادانہ اور منصفانہ انتخابات کرانا اور مثالی ضابطہ اخلاق پر عمل کرانا اس کی آئینی ذمہ داری ہے ۔ مسٹر شرما نے کہا کہ مسٹر مودي کے اپنے ایسے بیانات سے آئین اور وزیر اعظم کے دفتر کی توہین کر نے کے ساتھ ساتھ اپنے مخالفین کو ذلیل اور رسوا کر رہے ہیں ۔ وہ براہ راست ایسی دھمکیاں دے رہے ہیں جو جمہوریت کے لئے ٹھیک نہیں ہے ۔چونکہ مودی حکومت کے تمام دعوے غلط ثابت ہونے لگے ہیں اس لئے وہ ہر روز نیا نعرہ دے رہے ہیں۔ مسٹر شرما نے کہا کہ نوٹوں پر پابندي کے 100 دن پورے ہونے کے بعد بھی حکومت کالے دھن اور جعلی کرنسی کے اعداد و شمار جاری نہیں کر پائی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ نوٹ بندی سے نوجوان اور کسان سب سے زیادہ متاثر ہوئے ہیں اور حکومت سے حساب مانگ رہے ہیں۔ کانگریس لیڈر نے کہا کہ نوٹوں پر پابندي کے بعد غیر منظم علاقوں میں چھوٹی صنعتوں پر سب سے برا اثر پڑا ہے ۔ انھوںنے کہا کہ مسٹر مودی کے قول اور فعل میں بہت فرق ہے ۔ انہیں اپنے وعدوں کا پاس رکھنا چاہئے ۔ وزیر اعظم کے اس بیان سے ایک بڑا سیاسی تنازعہ پیدا ہو گیا ہے کہ اگر ایک گاؤں کو قبرستان کے لئے پیسے ملیں تو اسے شمشان کے لئے بھی فنڈز ملنا چاہئے ۔ وزیراعظم نے کل اتر پردیش کے فتح پور میں ایک انتخابی تقریر میں کہا تھا، “اگر ایک گاؤں کو قبرستان کے لئے فنڈز ملتا ہے تو اسے شمشان کیلئے بھی فنڈز ملنا چاہئے ۔ اگر آپ عید کے لئے مسلسل بجلی کی فراہمی فراہم کرتے ہیں تو آپ کو ہولی کے لئے بھی ایسا کرنا چاہئے ۔

TOPPOPULARRECENT