Tuesday , May 22 2018
Home / Top Stories / مودی گجرات کی بات کریں ‘ پاکستان کی نہیں ۔ راہول گاندھی کا مشورہ

مودی گجرات کی بات کریں ‘ پاکستان کی نہیں ۔ راہول گاندھی کا مشورہ

امیت شاہ ریموٹ کنٹرول سے گجرات چلاتے ہیں۔ خود وزیر اعظم بھی بی جے پی صدر سے خوفزدہ ۔ منتخب کانگریس صدر کا خطاب
بنس کنٹھا ( گجرات ) 11 ڈسمبر ( آئی اے این ایس ) گجرات انتخابات میں پاکستان کا تذکرہ کرنے پر وزیر اعظم نریندر مودی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کانگریس کے منتخب صدر راہول گاندھی نے آج کہا کہ مودی کو چاہئے کہ وہ گجرات میںانتخابی مہم کے دوران بیرونی ممالک پر تبصرے کرنے کی بجائے ریاست کے تعلق سے کچھ کہیں۔ راہول گاندھی نے بنس کنٹھا ضلع کے تھراڈ حلقہ میں پارٹی کی ایک انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم بعص مرتبہ پاکستان کی بات کرتے ہیں اور بعض مرتبہ چین اور جاپان کی بات کرتے ہیں۔ یہ الیکشن گجرات کے مستقبل کا ہے ۔ گجرات کے تعلق سے بھی کچھ کہا جانا چاہئے ۔ راہول گاندھی نے یہ ریمارکس ایسے وقت میں کئے جبکہ کل ہی نریندر مودی نے الزام عائد کیا تھا کہ کانگریس قائدین کے ایک گروپ نے پاکستانی ہائی کمشنر سے سابق کانگریس لیڈر منی شنکر ائر کی قیامگاہ پر دہلی میں ملاقات کی تھی ۔ اس کے بعد ہی ائیر نے انہیں ( مودی کو ) نیچ کہا تھا ۔ مودی نے سناند میں ایک جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ منی شنکر ائر کی قیامگاہ پر یہ اجلاس منعقد ہوا تھا جس میں پاکستانی ہائی کمشنر ‘ پاکستان کے وزیر خارجہ نے بھی شرکت کی تھی ۔ یہ ملاقات تین گھنٹو ںکی رہی تھی اور اس میں سابق نائب صدر جمہوریہ جناب حامد انصاری اور سابق وزیر اعظم ڈاکٹر منموہن سنگھ بھی موجود تھے ۔ اس کے دوسرے ہی دن منی شنکر ائر نے انہیں نیچ کہا تھا ۔ اس مسئلہ پر تنازعہ پیدا ہونے کے بعد کانگریس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے منی شنکر ائر کو پارٹی سے معطل کردیا تھا اور پھر خود منی شنکر ائر نے اپنے ریمارکس پر معذرت خواہی بھی کرلی تھی ۔ راہول گاندھی نے کہا کہ گذشتہ دو تین دن سے وزیر اعظم کے پاس کوئی مسائل نہیں رہ گئے ہیں اور وہ صرف دو باتوں پر اظہار خیال کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ساری تقریر کے دوران آدھا وقت مودی کانگریس کے تعلق سے بات کرتے ہیں۔ مودی کا دعوی ہے کہ ملک کو کانگریس سے پاک کردیا گیا ہے تو پھر کیوں کانگریس کو اپنی تقاریر میں اتنی اہمیت دی جا رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کے بعد مودی آدھا وقت خود کے تعلق سے اظہار خیال میں صرف کر رہے ہیں۔ کانگریس لیڈر نے مودی پر الزام عائد کیا کہ وہ گجرات کی ترقی پر خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ گجرات میں انتخابات کا موسم ہے اور انتخابی مہم زوروں پر اس کے باوجود نریندر مودی گذشتہ 22 سال میں گجرات میں ہوئی ترقی کے تعلق سے اظہار خیال نہیں کر رہے ہیں۔ وہ بی جے پی حکومتوں کے کام کاج بتانے کے موقف میں بھی نہیں ہیں۔ راہول گاندھی نے کہا کہ ایسا لگتا ہے کہ نریندر مودی گجرات کے عوام میں اعتماد کھوچکے ہیں۔ انہوں نے وزیر اعظم کو مشورہ دیا کہ وہ اپنی تقاریر میں کم از کم دو تین منٹ تو ترقی کے موضوع پر اظہار خیال کریں۔ راہول نے کہا کہ بی جے پی کے صدر امیت شاہ اپنے ریموٹ کنٹرول سے گجرات چلاتے ہیں اور خود وزیر اعظم بھی ان سے خوفزدہ ہیں۔ ایسا لگتا ہے کہ نریندر مودی امیت شاہ سے خوفزدہ ہیں۔ ان کی تقاریر کو سننے سے ہی یہ بات پتہ چلتی ہے ۔ مودی نے اپنی تقاریر میں کرپشن کے تعلق سے ایک لفظ بھی نہیں کہا ہے ۔ گجرات میں 9 ڈسمبر کو پہلے مرحلہ کی رائے دہی ہوچکی ہے جبکہ 14 ڈسمبر کو دوسرے مرحلہ کی رائے دہی ہونے والی ہے جس کی انتخابی مہم کا کل منگل کو اختتام عمل میں آئے گا ۔

TOPPOPULARRECENT