Sunday , February 18 2018
Home / ہندوستان / موہن بھاگوت پر فوج کی توہین کا الزام

موہن بھاگوت پر فوج کی توہین کا الزام

آر ایس ایس سربراہ قوم سے معذرت خواہی کریں : راہول گاندھی
نئی دہلی ۔12 فبروری ۔(سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کے صدر راہول گاندھی نے آر ایس ایس کے سربراہ موہن بھاگوت پر ملک کے لئے جان قربان کرنے والی فوج اور دیگر ایسے تمام افراد کی توہین و بداحترامی کا الزام عائد کیا ۔ انھوں نے بھاگوت کے ان ریمارکس کی سخت مذمت کی جس میں کہا گیا تھا کہ فوج کے مقابلے آر ایس ایس کہیں زیادہ تیزی کے ساتھ فوجی اہلکار تیار کرسکتی ہے ۔ کانگریس کے صدر نے آر ایس ایس سربراہ کے خطاب کو ہر ہندوستانی کی توہین قرار دیتے ہوئے مطالبہ کیا کہ آر ایس ایس کو ان ریمارکس پر فی الفور قوم سے معافی مانگنا چاہئے ۔ راہول گاندھی نے ٹوئٹر پر لکھا کہ ’’ آر ایس ایس سربراہ کا خطاب ہر ایک ہندوستانی کی توہین ہے کیونکہ اس سے ان کی توہین و بداحترامی ہوگی جنھوں نے ہمارے ملک و قوم کیلئے جان دی ہے ۔ یہ ہمارے پرچم کی توہین بھی ہے کیونکہ انھوں نے ہر اُس سپاہی کی توہین کی ہے جو پرچم کو سلام کرتا ہے ۔ ہماری فوج اور ہمارے شہیدوں کی توہین کرتے ہوئے بھاگوت کو شرم آنی چاہئے ۔ آر ایس ایس کو معذرت خواہی کرنا چاہئے ‘‘ ۔ واضح رہے کہ موہن بھاگوت نے گزشتہ روز بہار میں آر ایس ایس کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’’سنگھ ( آر ایس ایس ) اندرون تین دن فوجی اہلکار تیار کرسکتی ہے جبکہ فوج کو اس کام کیلئے 6 تا 7 ماہ کا وقت درکار ہوتا ہے ۔ یہ ہماری صلاحیت ہے ۔ اگر ملک کو ایسی کوئی صورتحال درپیش رہے اور دستور اجازت دیتا ہے تو سوائم سیوک مورچے سنبھالنے کیلئے تیار ہیں‘‘۔

TOPPOPULARRECENT