Monday , July 23 2018
Home / ہندوستان / مکرر امتحان ،سی بی ایس ای کا اختیار : عدالت

مکرر امتحان ،سی بی ایس ای کا اختیار : عدالت

نئی دہلی ۔ 4 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) سپریم کورٹ نے سی بی ایس ای 12 ویں جماعت کے پرچہ معاشیات کے مبینہ افشاء کے بعد مکرر امتحان منعقد کرنے اس بورڈ کے فیصلے کو چیلنج کرتے ہوئے دائر کردہ پانچ درخواستوں کو مسترد کردیا۔ عدالت عظمیٰ نے مکرر امتحان منعقد کرنا سنٹرل بورڈ آف سیکنڈری ایجوکیشن (سی بی ایس ای) کا اختیار تمیزی ہے اور اس کو کسی عدالت میں چیلنج نہیں کیا جاسکتا۔ جسٹس ایس اے بوبڈے اور جسٹس ایل ناگیشور راؤ پر مشتمل بنچ نے سی بی ایس ای کے فیصلے کو چیلنج کرنے والے طلبہ کو ہدایت کی کہ اگر یہ امتحان منعقد کئے جاتے ہیں تو وہ ان میں شرکت کریں۔ سی بی ایس ای 28 مارچ کو کہا تھا کہ 10 ویں جماعت کے پرچہ ریاضی (میتھس) اور 12 ویں جماعت کے پرچہ معاشیات کا مبینہ طور پر افشاء ہوا ہے جس کے بعد عدالت میں متعدد درخواستیں دائر کی گئی تھیں۔ سی بی ایس ای نے گذشتہ روز کہا تھا کہ اس کے تخمینہ سے پتہ چلا ہیکہ 10 ویں جماعت کے پرچہ ریاض کے افشاء کا کوئی اثر نہیں ہوا ہے اور اس کے مکرر امتحان منعقد نہیں کئے جائیں گے۔

TOPPOPULARRECENT