Monday , October 22 2018
Home / Top Stories / مکہ مسجد کے بعد اب وٹولی چھ مسلمانوں کو زندہ جلادینے کے ملزمین بری

مکہ مسجد کے بعد اب وٹولی چھ مسلمانوں کو زندہ جلادینے کے ملزمین بری

زعفرانی تنظیموں سے تعلق
استغاثہ کی پھر ناکامی ‘ افراد خاندان کا اظہار مایوسی
حیدرآباد ۔ /17 اپریل (سیاست نیوز) مکہ مسجد بم دھماکے کیس میں استغاثہ کی ناکامی کے نتیجہ میں ملزمین کی برأت کے بعد ایک اور اہم مقدمہ میں استغاثہ ناکام ہوگیا جس کے نتیجہ میں زعفرانی طاقتوں سے تعلق رکھنے والے 11 ملزمین کو سنسنی خیز وٹولی قتل عام واقعہ میں بری کردیا گیا ۔ تفصیلات کے بموجب عدم شواہد کی بنیاد اور استغاثہ جرم کی ثابت کرنے میں ناکامی کے نتیجہ میں عادل آباد ڈسٹرکٹ سیشن جج ارونا ساریکا نے وٹولی قتل عام کیس میں ملوث تمام ملزمین کو بری کردیا ۔ عادل آباد کے موضع بھینسہ میں /12 اکٹوبر 2008 کو ایک مسلم خاندان سے تعلق رکھنے والے 6 افراد کے مکان پر حملہ کرکے انہیں زندہ جلادیا گیا تھا ۔ اس کیس نے ریاست میں سنسنی پھیلادی تھی اور مختلف تنظیموں کی جانب سے پولیس کی سرزنش کئے جانے پر کیس کو سی بی سی آئی ڈی کے حوالے کردیا گیا تھا ۔ سی آئی ڈی نے ہندو بنیاد پرست تنظیموں سے تعلق رکھنے والے چندربھانو ، جادھو ونود ، اڈابانگی چندرا کانت ، جادھو اودودھ ، جادھو بھاگوت راؤ ، سوریا ونشی رمن ، جادھو ونائیک ، کے ناگناتھ اور شنڈے دگمبر کو گرفتار کرکے ان کے خلاف سشن کورٹ میں چارج شیٹ داخل کی تھی ۔ سی بی سی آئی ڈی نے عدالت میں 80 شواہد پیش کئے تھے جس میں60 کو ریکارڈ پر لیا گیا ۔ عدالت نے کیس کی سماعت کے بعد اپنا فیصلہ سناتے ہوئے تمام ملزمین کو بری کردیا اور بتایا کہ سی آئی ڈی ملزمین کے خلاف شواہد پیش کرنے اور الزامات ثابت کرنے میں ناکام ہوگئی ہے جس کے نتیجہ میں انہیں بری کیا جارہا ہے ۔ سیشنس کورٹ کی جانب سے ملزمین کو بری کئے جانے پر سی آئی ڈی نے فیصلے کے خلاف ہائیکورٹ سے رجوع ہونے کی تیاری شروع کردی ہے ۔ فیصلہ کے بعد مقتول کے افراد خاندان انتہائی مایوسی کا شکار ہوگئے اور حیرت ظاہر کی ۔ مقتول کے رشتہ دار عمران نے کہا کہ انہیں انصاف کی امید تھی اور 10 سال طویل انتظار کے باوجود انہیں مایوسی کا سامنا کرنا پڑا ۔ انہوں نے کہا کہ واقعہ کے فوری بعد انہوں نے اس کیس کی سی بی آئی سے تحقیقات کا مطالبہ کیا تھا لیکن سی آئی ڈی کو ذمہ دے کر حکومت نے درست فیصلہ نہیں کیا ۔ وٹولی قتل عام واقعہ کے بعد سماج وادی پارٹی صدر ملائم سنگھ یادو ، اس وقت کے رکن پارلیمنٹ ، جیہ پردہ ، امرسنگھ اور دیگر نے وٹولی بھینسہ پہونچ کر متاثرہ افراد کے خاندان سے ملاقات کی تھی اور مناسب مدد کا وعدہ کیا تھا ۔

مکہ مسجد دھماکہ کیس کے ملزمین کو برات دینے والے جج کو سکیوریٹی
حیدرآباد 17 اپریل ( سیاست نیوز ) پولیس نے این آئی اے جج کے رویندر ریڈی کی سکیوریٹی بڑھا دی ہے ۔ جج نے کل مکہ مسجد بم دھماکہ کیس کے ملزمین کو بری کرنے کے بعد استعفی پیش کردیا تھا ۔ ذرائع کے بموجب انٹلی جنس اطلاعات کو دیکھتے ہوئے سکیوریٹی بڑھا دی گئی ہے ۔ رچہ کونڈہ کمشنریٹ کی ملکاجگری پولیس نے سکیوریٹی سخت کرنے کی توثیق کی ۔

TOPPOPULARRECENT