Thursday , January 17 2019

مک مولوانی ‘ وائیٹ ہاوز کے نئے چیف آف اسٹاف مقرر

واشنگٹن 15 ڈسمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے اپنے بجٹ ڈائرکٹر مکی مولوانی کو وائیٹ ہاوز کا عبوری چیف آف اسٹاف مقرر کیا ہے ۔ اس طرح وہاں وفاقی حکومت میں انتہائی اہمیت کے حامل عہدہ کیلئے کسی موزوں امیدوار کی تلاش ختم ہوئی ہے ۔ امریکی صدر نے ٹوئیٹ کیا تھا کہ مولوانی نے ان کے انتظامیہ میں بہترین کام کیا ہے اور وہ جان کیلی کی جگہ نئے سال سے یہ ذمہ داری سنبھالیں گے ۔ ٹرمپ نے ٹوئیٹ کیا کہ وہ یہ اعلان کرتے ہوئے خوشی محسوس کر رہے ہیں کہ ڈائرکٹر آف آفس آف مینجمنٹ اینڈ بجٹ مک مولوانی جنرل جان کیلی کی جگہ وائیٹ ہاوز کے چیف آف اسٹاف ہونگے ۔ جنرل جان کیلی نے بھی پوری مہارت کے سات ملک کی خدمت کی ہے ۔ کیلی جاریہ مہینے کے ختم پر سبکدوش ہوجائیں گے ۔ ٹرمپ نے یہ اعلان ایسے وقت میں کیا ہے جبکہ وہاں قیاس آرائیاں جاری تھیں کہ اس عہدہ پر کیلی کا جانشین کون ہوسکتا ہے ۔ یہ بھی کہا جا رہا تھا کہ کچھ امکانی عہدیداروں نے یہ پیشکش مسترد بھی کردی ہے ۔ تاہم وائیٹ ہاوز نے ان اطلاعات کی تردید کی ہے اور ٹرمپ نے بھی یہ کہا تھا کہ اس عہدہ کیلئے کئی امیدواروں کے ناموں پر غور کیا جارہا ہے ۔ ٹرمپ نے کہا کہ کئی لوگ ایسے تھے جو وائیٹ ہاوز کے چیف آف اسٹاف کی حیثیت سے کام کرنا چاہتے تھے تاہم ان کے خیال میں مک مولوانی یہ کام بہترین انداز میں انجام دے سکتے ہیں۔ ٹرمپ نے اپنے ٹوئیٹ میں کہا کہ وہ مولوانی کے ساتھ کام کرنے کے منتظر ہیں اور انہیں امید ہے کہ وہ امریکہ کی بہترین خدمت انجام دینگے اور ان کی معیاد سال کے ختم تک رہے گی ۔ انہوں نے کہا کہ وہ ایک محب وطن ہیں اور وہ ( ٹرمپ ) شکرگذار ہیں کہ انہو ںنے وائیٹ ہاوز چیف آف اسٹاف کی حیثیت سے کام کرنا قبول کیا ہے ۔ یہ بھی کہا گیا ہے کہ مک مولوانی ڈائرکٹر مینجمنٹ اینڈ بجٹ کی حیثیت سے استعفی پیش نہیں کرینگے اور وہ دونوں ذمہ داریاں نبھاتے رہیں گے ۔ زیادہ وقت وہ وائیٹ ہاوز کیلئے کام کرینگے ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT