Tuesday , June 19 2018
Home / سیاسیات / مہاراشٹرا اسمبلی میں گوپی ناتھ منڈے کو زبردست خراج

مہاراشٹرا اسمبلی میں گوپی ناتھ منڈے کو زبردست خراج

ممبئی۔/6جون، ( سیاست ڈاٹ کام ) مہاراشٹرا اسمبلی نے آج بی جے پی لیڈر اور مرکزی وزیر گوپی ناتھ منڈے کو زبردست خراج عقیدت پیش کیا جن کا منگل کے روز ایک سڑک حادثہ میں انتقال ہوگیا تھا۔ خراج عقیدت کے دوران انھیں عوام کا سچا خادم اور زندگی سے بھرپور شخص قرار دیا گیا۔ وزیراعلیٰ پرتھوی راج چوہان نے ایوان میں تحریک تشکر پیش کی تھی جس کے ذریعہ م

ممبئی۔/6جون، ( سیاست ڈاٹ کام ) مہاراشٹرا اسمبلی نے آج بی جے پی لیڈر اور مرکزی وزیر گوپی ناتھ منڈے کو زبردست خراج عقیدت پیش کیا جن کا منگل کے روز ایک سڑک حادثہ میں انتقال ہوگیا تھا۔ خراج عقیدت کے دوران انھیں عوام کا سچا خادم اور زندگی سے بھرپور شخص قرار دیا گیا۔ وزیراعلیٰ پرتھوی راج چوہان نے ایوان میں تحریک تشکر پیش کی تھی جس کے ذریعہ منڈے کو ایک ایسی شخصیت قرار دیا گیا جو زندگی سے بھرپور تھی لیکن موت کے بے رحم ہاتھوں نے انھیں اسوقت چھین لیا جب وہ اپنے سیاسی کیریئر کے عروج پر تھے۔ قبل ازیں منڈے کی موت پر ایوان میں تحریک تعزیت پہلے ہی پیش کی جاچکی ہے۔ مسٹر چوہان نے کہا کہ منڈے ایسی شخصیت کا نام تھا جنہوں نے کبھی بھی انتخابات کو تن آسانی سے نہیں لیا اور ہمیشہ آئندہ اقدامات کی حکمت عملی تیار کیا کرتے تھے۔ مہاراشٹرا میں منعقد شدنی اسمبلی انتخابات کیلئے وہ بیحد پُرعزم تھے۔ انہوں نے منڈے کے مہاراشٹرا کے وزارت اعلیٰ کے جلیل القدر عہدہ پر فائز ہونے کے عزائم کی جانب درپردہ اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ان کے کیا عزائم تھے

اور آیا انھیں عوام کی جانب سے قبول کیا جاتا یا نہیں، اس کے بارے میں اب ہمیں کچھ معلوم نہیں ہوگا۔ آخری بار جب ہماری فون پر گفتگو ہوئی تھی تو منڈے دیہی ترقیات کے قلمدان سے متعلق بے حد پُرعزم تھے اور یہاں تک کہ انہوں نے وزارت کو درکار بجٹ کے بارے میں اور مہاراشٹرا کے دیہی علاقوں کی ترقی کیلئے اس بجٹ کو کس طرح استعمال کیا جائے گا، وہ بھی بتایا تھا۔ منڈے کی شخصیت پر مزید روشنی ڈالتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وہ پارٹی وفاداریوں سے بالاتر ہوکر کسی سے بھی دوستی کرسکتے تھے اور اس پر قائم بھی رہتے تھے۔ قائد اپوزیشن ایکناتھ کھڈسے نے بتایا کہ اسمبلی انتخابات کو لیکر آنجہانی کی دلچسپی کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ انہوں نے یکم جون کو بی جے پی قائدین سے ملاقات کی تھی۔ میں نے اُن سے یہ بھی کہا تھا کہ اسمبلی کے مانسون سیشن کے اختتام کے بعد ہم تقریباً پندرہ روز بعد ایک بار اور ملاقات کریں گے جس کا جواب دیتے ہوئے منڈے نے کہا تھا’’ اتنا وقت کس کے پاس ہے۔ ‘‘

TOPPOPULARRECENT