Friday , December 15 2017
Home / ہندوستان / مہاراشٹرا حکومت کھڈسے کو بچانے کوشاں: پٹیل

مہاراشٹرا حکومت کھڈسے کو بچانے کوشاں: پٹیل

ناگپور 18 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) این سی پی لیڈر و سابق مرکزی وزیر پرافل پٹیل نے ادعا کیا ہے کہ مہاراشٹرا کی دیویندر فرنویس حکومت اپنے سابقہ وزیر ایکناتھ کھڈسے کو بچانے کی کوشش کر رہی ہے جنہیں کرپشن کے مختلف الزامات کے تحت وزارت سے استعفی پیش کرنا پڑا تھا ۔ پرافل پٹیل نے کہا کہ ہم ہمیشہ سے اے سی بی تحقیقات کے تعلق سے اندیشوں کا شکار رہے ہیں۔ جس انداز سے حکومت کھڈسے کو بچا رہی ہے یہ بالکل واضح ہے کہ انہیں صاف بچالیا جائیگا ۔ انہوں نے ذرائع ابلاغ کی ان اطلاعات پر یہ ریمارک کیا جن میں یہ قیاس آرائیاں کی جا رہی تھیںکہ اے سی بی نے کھڈسے کو رشوت کے الزامات میں کلین چٹ دی ہے ۔ کہا گیا ہے کہ اس کیس میں اے سی بی کی چارچ شیٹ میں کھڈسے کا نام شامل نہیں ہے جس سے انہیں کلین چٹ مل گئی ہے تاہم اس میںکھڈسے کے پرسنل اسسٹنٹ گجانن پاٹل پر رشوت کا الزام عائد کیا گیا ہے ۔ کھڈسے پر الزام ہے کہ انہوں نے پونے کے قریب بھوساری کے مقام پر مہاراشٹرا انڈسٹریل ڈیولپمنٹ کارپوریشن کی اراضی بے قاعدگیوں کے ذریعہ خریدی ہے ۔ پرافل پٹیل نے اس کیس کی تحقیقات سبکدوش جج سے کروانے کے فیصلے پر بھی تنقید کی اور کہا کہ تحقیقات کمیشن آف انکوائری قانون کے تحت کروائی جانی چاہئیں۔

TOPPOPULARRECENT