Wednesday , December 12 2018

مہاراشٹرا میں سینا ۔ بی جے پی اتحاد برقرار رہنے کے آثار

ممبئی 23 ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) مہاراشٹرا اسمبلی انتخابات کیلئے ایک ہفتے تک نشستوں کی تقسیم پر تنازغہ کے بعد بالآخر سینا ۔ بی جے پی نے اپنے 25 سالہ اتحاد کو برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ یہاں 15 اکٹوبر کو ووٹ ڈالے جانے ہیں۔ شیوسینا نے 288 رکنی اسمبلی میں 151 نشستوں پر مقابلہ پر اٹل رہنے کا فیصلہ کیا ہے اور اس کی نظر چیف منسٹر کے عہدہ پر ہے ۔

ممبئی 23 ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) مہاراشٹرا اسمبلی انتخابات کیلئے ایک ہفتے تک نشستوں کی تقسیم پر تنازغہ کے بعد بالآخر سینا ۔ بی جے پی نے اپنے 25 سالہ اتحاد کو برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ یہاں 15 اکٹوبر کو ووٹ ڈالے جانے ہیں۔ شیوسینا نے 288 رکنی اسمبلی میں 151 نشستوں پر مقابلہ پر اٹل رہنے کا فیصلہ کیا ہے اور اس کی نظر چیف منسٹر کے عہدہ پر ہے ۔ اس نے بی جے پی کیلئے 124 – 126 نشستیں چھوڑنے سے اتفاق کرلیا ہے اور ہوسکتا ہے کہ ایک اور نشست بھی بی جے پی کیلئے چھوڑ دی جائے ۔ اگر دونوں ہی جماعتیں اس اتحاد پر راضی ہوجائیں تو شیوسینا 150 حلقوں سے بی جے پی 124 تا 126 حلقوں سے اور دوسری چھوٹی جماعتیں 12 تا 14 حلقوں سے مقابلہ کرسکتی ہیں۔ رات دیر گئے تک بھی دونوں جماعتوں کے قائدین میں بات چیت چل رہی تھی تاکہ کسی فارمولے کو قطعیت دی جاسکے جبکہ اتحاد میں شامل چھوٹی جماعتوں نے انہیں انتہائی کم تعداد میں نشستیں چھوڑنے پر ناراضگی کا اظہار کیا ہے ۔ آج دونوں جماعتوں کے قائدین میں تلخی سے زیادہ خوشگوار انداز دیکھا گیا ہے ۔ سینا کے ترجمان اخبار سامنا میں واضح کیا گیا ہے کہ اس اتحاد میں جو مسائل تھے وہ دو رکرلئے گئے ہیں اور یہ اتحاد اب بہت تیزی سے آگے بڑھے گا ۔ بی جے پی کے کئی قائدین کی جانب سے شیوسینا سربراہ ادھو ٹھاکرے سے بات چیت کے بعد شیوسینا کے موقف میں نرمی پیدا ہوگئی ۔ پارٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ اتحاد برقرار رہے گا اور چھوٹی جماعتوں کے ساتھ بھی بات چیت کرتے ہوئے قطعی فارمولے کو تیار کیا جارہا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT