Saturday , November 17 2018
Home / شہر کی خبریں / مہا کوٹمی کی مخالف تلنگانہ سازش: ای راجندر

مہا کوٹمی کی مخالف تلنگانہ سازش: ای راجندر

عوام کو ترقی چاہیئے یا تاریکی، آندھرائی طاقتوں کو ناکام بنانے کی اپیل

حیدرآباد۔/3 نومبر، ( سیاست نیوز) وزیر فینانس ای راجندر نے کہا کہ وقت آچکا ہے کہ عوام مہا کوٹمی کی سازشوں کو ناکام بناتے ہوئے یہ ثابت کردیں کہ وہ ٹی آر ایس کے ساتھ ہیں جو ریاست کی ترقی اور عوام کی بھلائی کو یقینی بناسکتی ہے۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے راجندر نے الزام عائد کیا کہ کانگریس اور تلگودیشم نے اپنے دور حکومت میں عوام کے ساتھ دھوکہ کیا تھا اور آج دونوں دھوکہ باز پارٹیاں متحد ہوکر تلنگانہ عوام کو پھر ایک بار دھوکہ دینے کی تیاری کررہے ہیں۔ انہوں نے سوال کیا کہ موقع پرست اتحاد کے ذریعہ عوام سے وعدے کرنے والی جماعتوں کو واضح کرنا چاہیئے کہ انہوں نے اپنے دور اقتدار میں 2000 روپئے پنشن کیوں نہیں دیا تھا۔ کسانوں کو فصلوں پر امداد اور بیمہ اسکیم کا خیال کیوں نہیں آیا۔ ٹی آر ایس کو شکست دینے کیلئے ناقابل عمل وعدوں کی بھرمار کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ تلنگانہ عوام تینوں پارٹیوں کی کارکردگی سے اچھی طرح واقف ہیں اور انہوں نے ٹی آر ایس کو دوبارہ اقتدار کا فیصلہ کرلیا ہے۔ راجندر نے کہا کہ ٹی آر ایس دور حکومت میں اپوزیشن ارکان اسمبلی کے حلقوں میں بھی غیر معمولی ترقی ہوئی ہے جس کا اعتراف ارکان اسمبلی کو ہے۔ انہوں نے بتایا کہ آبپاشی پراجکٹس کیلئے حکومت کی سنجیدگی کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ مقررہ میعاد میں پراجکٹس کی تکمیل کی مساعی کی گئی لیکن اپوزیشن نے پراجکٹس کو روکنے کیلئے 200 سے زائد مقدمات دائر کئے۔ سابق میں اراضی کی تقسیم پر 92 کروڑ روپئے خرچ کئے گئے تھے جبکہ ٹی آر ایس کے چار سالہ دور حکومت میں 500کروڑ خرچ کئے گئے۔ وزارت فینانس نے ایک لاکھ 9 ہزار جائیدادوں پر تقررات کو منظوری دی اور ابھی تک 40 ہزار جائیدادوں پر تقررات مکمل کرلئے گئے مزید 40 ہزار جائیدادوں پر تقرر کا عمل جاری ہے۔ راجندر نے کہا کہ مہا کوٹمی کے برسر اقتدار آنے پر تلنگانہ میں دوبارہ پسماندگی کا دور دورہ رہے گا۔ ترقی کے بجائے بحران اور ہر شعبہ میں عوام کو مسائل پیدا ہوں گے۔ عوام کو انتخاب کرنا ہوگا کہ انہیں ترقی چاہیئے یا پھر تاریکی۔ ٹی آر ایس نے ہر شعبہ کو 24 گھنٹے برقی سربراہی کا ریکارڈ قائم کیا ہے۔ چندرا بابو نائیڈو کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے راجندر نے کہا کہ کانگریس پارٹی سے ہاتھ ملا کر تلنگانہ پر کنٹرول کرنا چاہتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں چندرا بابو نائیڈو کی طرح غدار کوئی نہیں جس شخص نے اپنے خسر کو دھوکہ دیا وہ کسی کو بھی دھوکہ دے سکتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT