Saturday , January 20 2018
Home / شہر کی خبریں / مہلوکین کے ورثاء کو فی کس 5لاکھ روپئے ایکس گریشیا

مہلوکین کے ورثاء کو فی کس 5لاکھ روپئے ایکس گریشیا

ڈپٹی چیف منسٹر کا اعلان: جنگی خطوط پر راحت کاری اقدامات کی بھی ہدایت

ڈپٹی چیف منسٹر کا اعلان: جنگی خطوط پر راحت کاری اقدامات کی بھی ہدایت
حیدرآباد۔/24جولائی، ( سیاست نیوز) میدک کے ماسائی پیٹ منڈل میں اسکولی بس کے ٹرین کی زد میں آجانے کے بھیانک سانحہ کی اطلاع ملتے ہی ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی، وزیر داخلہ این نرسمہا ریڈی، وزیر فینانس ای راجندر اور وزیر ایکسائیز پدما راؤ نے اعلیٰ عہدیداروں سے ربط قائم کرکے جنگی خطوط پر بچاؤ و راحت کے کام انجام دینے کی ہدایت دی۔ یہ وزراء سیدھے سکندرآباد کے یشودھا ہاسپٹل پہنچے جہاں زخمی طلبہ کو منتقل کیا جارہا تھا۔ وزرا نے شخصی نگرانی میں طلبہ کو نہ صرف دواخانہ میں شریک کیا بلکہ ماہر ڈاکٹرس کی موجودگی میں ان کے علاج کے آغاز کو یقینی بنایا۔ وزراء نے محکمہ صحت کے عہدیداروں کو طلب کرکے مکمل علاج تک موجود رہنے اور کسی ضرورت کی صورت میں ہاسپٹل انتظامیہ سے تعاون کی ہدایت دی۔ اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی اور وزیر داخلہ این نرسمہا ریڈی نے اس واقعہ کیلئے ریلوے حکام کو ذمہ دار قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ مقامی عوام کی جانب سے مسلسل نمائندگی کے باوجود ریلوے کراسنگ پر گیٹ تعمیر نہیں کی گئی جبکہ اس راستے سے روزانہ بڑی تعداد میں گاڑیوں کا گذر ہوتا ہے۔ ڈپٹی چیف منسٹر محمود علی نے کہا کہ ریلوے حکام کو ہدایت دی گئی ہے کہ آئندہ چھ ماہ میں تلنگانہ کے تمام ایسے ریلوے کراسنگس پر گیٹ تعمیر کردیئے جائیں جہاں سے گاڑیوں کا گذر ہوتا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ریلوے حکام نے اس سلسلہ میں اقدامات کا تیقن دیا۔ انہوں نے بتایا کہ ریاستی حکومت بھی ان کاموں کی جلد تکمیل کیلئے ہر ممکن تعاون کریگی۔ محمود علی نے کہا کہ اس ریلوے کراسنگ پر سابق میں کئی حادثات رونما ہوئے لیکن ریلوے حکام نے کوئی توجہ نہیں دی۔ محمود علی نے کہا کہ تلنگانہ حکومت مہلوکین کے پسماندگان کو فی کس 5لاکھ روپئے ایکس گریشیا ادا کریگی۔ اس کے علاوہ تمام زخمیوں کا مکمل طور پر سرکاری خرچ پر علاج کیا جائیگا اور ان زخمیوں کے خاندانوں کو مناسب امداد دی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ بیشتر مہلوک طلبہ کے خاندان غریب ہیں لہذا حکومت تمام متاثرہ غریب خاندانوں کی باز آبادکاری کو یقینی بنائیگی۔ انہوں نے کہا کہ وزارت ریلوے نے مہلوکین کیلئے 2لاکھ روپئے ایکس گریشیا کا اعلان کیا ہے تاہم تلنگانہ حکومت اس بات کی کوشش کرے گی کہ مرکز فی مہلوک 10لاکھ روپئے ایکس گریشیا ادا کرے۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے اس دلخراش واقعہ میں کمسن بچوں کی ہلاکت پر گہرے دکھ کا اظہار کیا اور دواخانہ پہنچنے والے افراد خاندان اور والدین کو پرسہ دیا۔ دواخانہ میں زخمیوں اور مہلوکین کے افراد خاندان کی آہ و بکا سے سارا ماحول غمگین ہوگیا تھا اور ڈپٹی چیف منسٹر خود بھی جذبات سے مغلوب ہوگئے۔ انہوں نے تقریباً پانچ گھنٹے دواخانہ میں گذارے اور عہدیداروں کو بہتر علاج کے سلسلہ میں ہدایات دیتے رہے۔جناب محمود علی نے بتایا کہ چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ اس واقعہ پر کافی غمگین ہیں اور انہوں نے بعض وزراء کو میدک پہنچنے کی ہدایت دی جس پر ریاستی وزراء ہریش راؤ، جگدیش ریڈی اور مہیشور ریڈی فوری طور پر مقام حادثہ روانہ ہوئے اور بچاؤ و راحت کاموں کی نگرانی کی۔

TOPPOPULARRECENT